News Search
Home News Dictionary TV Channels Names Weather Live Cricket Videos Photos Results Naats
Home Taza Tareen
افغان فورسز کی چمن میں بلااشتعال فائرنگ، 1 شہری شہید، 18 افراد زخمی     چمن بارڈر پر افغان فورسز کی فائرنگ، 4 ایف سی جوان زخمی، آئی ایس پی آر     راجن پور: تھانہ محمد پور کی حدود میں فائرنگ،4افراد جاں بحق 1زخمی     وزیراعظم کا ویژن پاکستان کو لوڈ شیڈنگ فری بنانا ہے، عابد شیرعلی     آخری دن میزبان بولنگ کا ہمارے پاس جواب نہ تھا، مصباح الحق     بارباڈوس:ویسٹ انڈیزکےہاتھوں پاکستان کوعبرتناک شکست     سرحد پار سے مردم شماری ٹیم پر فائرنگ، چمن سرحد بند     ’مکی‘ اور ’منی‘ حقیقی زندگی میں میاں بیوی تھے     پاناما کیس، سپریم کورٹ کا آج ہی جے آئی ٹی تشکیل دینے کا فیصلہ     پنجاب: مختلف اضلاع میں سرچ آپریشن، 41 افراد گرفتار     
Urdu News
Maulana Tariq Jamil
a
Naat Khawan
Amjad Sabri Farhan Ali Qadri
Fasih Uddin Soharwardi Ghulam Mustafa Qadri
Imran sheikh Attari Junaid Jamshed
Owais Raza Qadri Shahbaz Qamar Faridi
Syed Mohammad Furqan Qadri Ummeh Habiba
Waheed Zafar Qasmi Zulfiqar Ali
UrduWire Names Directory
Muslim Names Arabic Names
Muslim Boy Names Muslim Girl Names
Pictures Gallery
Cleaning The Kaaba Area - One Of The Best Jobs In The World Cleaning The Kaaba Area - One Of The Best Jobs In The World
Kallar Kahar beautiful Motorway road view, Pakistan Kallar Kahar beautiful Motorway road view, Pakistan
Samzu Water Park Pictures Ticket Price 2015 & Location in Karachi Samzu Water Park Pictures Ticket Price 2015 & Location in Karachi
View all Pictures

 

Home >> Urdu News >> Voice Of America Urdu
عالمی خبریں Share your views
پرتشدد مواد کی نگرانی، فیس بک تین ہزار کارکن بھرتی کرے گا [وائس آف امریکہ اردو] 03 May, 2017

کمپنی نے کہا ہے کہ تین ہزار نئے کارکن صرف لائیو ویڈیوز پر ہی نگاہ نہیں رکھیں گے بککہ وہ فیس بک پر شائع ہونے والے تمام مواد کی نگرانی کریں گے۔

سماجی رابطوں کی معروف ویب سائٹ فیس بک نے کہاہے کہ وہ اپنے صفحات پر صارفین کی جانب سےتشدد پر مبنی شائع کیا جانے والے مواد کا کھوج لگانے اور اسے ہٹانے کے لیے تین ہزار کارکن بھرتی کرے گا۔

فیس بک کے چیف ایکزیکٹو زوکر برگ نے بدھ کے روز بتایا کہ اگلے سال کے دوران بھرتی کیے جانے والے کارکن سوشل میڈیا نیٹ ورک پر شائع کیے جانے والے غیر مناسب مواد کی اطلاع دینے اور قتل ، خودکشی اور تشدد پر مبنی دوسری کارروائیوں کی ویڈیوز تیزی سے ہٹانے کا کام کریں گے۔

نئے کارکنوں کی بھرتی فیس بک انتظامیہ کی جانب سے یہ تسلیم کرنا ہے کہ اس مسئلے سے نمٹنے کے لیے خودکار سافٹ ویئر سے کہیں آگے بڑھ کر کام کرنے کی ضرورت ہے۔

فیس بک کی جانب سے پچھلے سال شروع کی جانے والی ایک سروس" فیس بک لائیو" صارفین کو کسی بھی واقعہ کی براہ راست رپورٹنگ کی سہولت مہیا کرتی ہے۔ لیکن اس سروس کو بعض افراد نے تشدد کے واقعات کو براہ راست نشر کرنے کے لیے استعمال کیا۔

کمپنی کے بانی زوکربرگ نے فیس بک پر اپنی ایک پوسٹ میں کہا ہے کہ اس مقصد کے لیے پہلے ہی ساڑھے چار ہزار کارکن کام کر رہے ہیں۔ تین ہزار نئے کارکنوں کی بھرتی کا مقصد نگرانی کرنے اور ناپسندیدہ مواد کو ہٹانے کے عمل کو تیز تر بنانا ہے۔

پچھلے ہفتے تھائی لینڈ میں ایک باپ نے فیس بک لائیو پر اپنی بیٹی کو ہلاک کرنے کا منظر براڈکاسٹ کیا تھا جسے فیس بک سے ہٹائے جانے سے قبل تقریباً ایک دن کے دوران تین لاکھ 70 ہزار سے زیادہ لوگوں نے دیکھا۔

شکاگو اور کلیولینڈ جیسے کئی دوسرے علاقوں سے فیس بک پر اپ لوڈ ہونے والی تشدد پر مبنی ویڈیوز نے لوگوں کی پریشانی میں اضافہ کیا۔

زوکربرگ نے کہا ہے کہ ہم ایسے اقدامات کررہے ہیں جن کی مدد سے تشدد پر مبنی مواد کا جلد از جلد کھوج لگانا اور انہیں ہٹانا مزید آسان ہوجائے گا۔ کمپنی نے کہا ہے کہ تین ہزار نئے کارکن صرف لائیو ویڈیوز پر ہی نگاہ نہیں رکھیں گے بککہ وہ فیس بک پر شائع ہونے والے تمام مواد کی نگرانی کریں گے۔

فیس بک سماجی رابطوں کا دنیا کا سب سے بڑا نیٹ ورک ہے اور ایک مہینے کے دوران اسے استعمال کرنے والوں کی تعداد ایک ارب اور 90 کروڑ سے زیادہ ہے۔

اس وقت کمپنی تشدد، فحاشی اور دوسرے جرائم کا کھوج لگانے کے لیے مصنوعی ذہانت کے ایک سافٹ ویئر سے مد د لے رہی ہے، جو خودکار طریقے سے یہ کام سرانجام دیتا ہے۔

اس کے ساتھ ساتھ فیس بک اپنے صارفین کی جانب سےاس طرح کے کسی واقعہ کی اطلاع ملنے پر تیزی سے کارروائی کرتا ہے۔

قابل اعترااض مواد کی نگرانی کرنے والا عملہ زیادہ تر کنٹریکٹ پر کام کرتا ہے اور یہ کام زیادہ تر بھارت اور فلپائن میں کیا جاتا ہے ، تاہم ان علاقوں میں کام کے حالات کی وجہ سے مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

فیس بک فورم


View News As Image
Post Your Comments
Select Language:    
Type your Comments / Review in the space below.

Name: Email:(Will not be shown) City:
Enter The Code:

 
Home | About Us | Contact Us |  Profiles |  Privacy Policy & Disclaimer | What is Meta News?
Top Searches: Jang News Cricinfo Express Tribune,  , SSC Part 1 Results 2016   Dunya News Bol News Live Samaa News Live Metro 1 News Waqt News Hum TV PTV Sports Live KTN News
Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on "as it is" based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Please read more!

UrduWire.com - First ever Urdu Meta News portal