برطانیہ بھی خلائی دوڑ میں شامل ہونے کے لیے تیار

بول نیوز  |  May 11, 2022

کورن وال اس موسمِ گرما میں برطانوی حکومت کے لیے دو جوتوں کے ڈبوں کے برابر سیٹلائیٹس لانچ کر کے خلائی دوڑ میں شامل ہونے کے لیے تیار ہے۔

چھوٹے مکعب کی شکل کے سیٹلائیٹس، کیوب سیٹس، لانچر ون نامی راکٹ پر لاد کر خلاء میں بھیجا جائے گا، جو اسپیس پورٹ کورن وال سے اڑنے والے جمبو جیٹ سے خود کو علیحدہ کرے گا۔

تعیناتی کے بعد یہ سیٹلائیٹس ہائی ٹیک امیجنگ سینسرز کے طور پر کام کریں گے، جس سے برطانوی وزارتِ دفاع زمین اور سمندروں کی نگرانی کر سکے گی۔

وزارت کے مطابق وزارتِ دفاع کا ’پرومیتھیس-2‘ مشن دفاعی صلاحیتوں کو مضبوط کرے گا اور اتحادیوں کے ساتھ مزید مربوط خلائی مواصلاتی نظام کے راستے کو ہموار کرے گا۔

کورن وال خلائی اڈہ برطانیہ کے تین خلائی اڈوں میں سے ایک ہے جن کا مقصد 2022 میں سیٹلائیٹ لانچز کی شروعات کرنا ہے۔

سیٹلائیٹ لانچز کی یہ شروعات 1952 میں قائم ہونے والے برطانوی اسپیس پروگرام کے 70 سال بعد کی جارہی ہے۔

دوسری جانب اسکاٹ لینڈ کی اسپیس ہب سدرلینڈ 62 فٹ لمبے پرائم نامی راکٹ کے لانچ کی میزبانی کرے گا۔ یہ راکٹ اسکاٹش قصبے فاریس کی مقامی کمپنی اوربیکس نے بنایا ہے۔

اوربیکس کے ماحولیات دوست پرائم راکٹ کو ایسا بنایا گیا ہے کہ اس کو دوبارہ استعمال کیا جاسکتا ہے اور اس کا ملبہ زمین، سمندروں یا ایٹماسفیئر میں نہیں پھیلے گا۔

مزید پڑھیں45 mins agoوہیل شارک کی بڑی تعداد جہازوں کے تصادم سے مر رہی ہیں: تحقیق

آبی حیاتیات کے ماہرین نے خبردار کیا ہے کہ جہاز رہانی کے...

1 hour agoبورس جانسن بھی ٹِک ٹاک پر آگئے

برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن بھی مشہور ویڈیو ایپلی کیشن ٹِک ٹاک...

21 hours agoایک ماہ میں بٹ کوائن کی مارکیٹ ویلیو میں اربوں ڈالر کی کمی

کرپٹو کرنسی مارکیٹ میں ہونے والی کمی کے نتیجے میں ایک ماہ...

22 hours agoآئی فون استعمال کرنے والے اچھے ڈرائیور ہوتے ہیں یا اینڈرائیڈ صارفین؟

اگر بجٹ اور جیب اجازت دے تو موبائل فون صارفین کی اکثریت...

1 day ago’کورونا سے ہونے والی اموات کے ایک تہائی حصے کا تعلق بھارت سے ہے‘

عالمی ادارہ صحت کی جانب سے جاری ہونے والی نئی رپورٹ میں...

1 day agoجیمز ویب اسپیس ٹیلی اسکوپ کے مشاہدات علمِ فلکیات کو ہمیشہ کے لیے بدل دیں گے

ماہرینِ فلکیات کا کہنا ہے کہ جیمز ویب اسپیس ٹیلی اسکوپ سے...

تازہ ترین نیوز پڑہنے کے لیے ڈاؤن لوڈ کریں بول نیوزایپ

General Rectangle – 300×250
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More