سعودی عرب میں کرونا وائرس سے پاکستانی ڈاکٹر چل بسا

سماء نیوز  |  Jun 06, 2020

سعودی عرب میں کرونا سے لڑتے ہوئے پہلے پاکستانی ڈاکٹرجاں بحق ہوگئے۔ سعودی حکومت اور پاکستانی قونصل جنرل نے ان کی خدمات پر انہیں خراج عقیدت پیش کیا ہے۔

سعودی عرب میں کرونا وائرس کے مریضوں کے علاج کے دوران مکہ حرا جنرل اسپتال کے سرجن پاکستانی ڈاکٹر نعیم خالد چوہدری جاں بحق ہوگئے۔ سعودی عرب میں کرونا سے شہید ہونے والے یہ پہلے پاکستانی ڈاکٹرہیں۔ اُن کی عمرچھیالیس برس تھی۔ اُن کا تعلق ڈسٹرکٹ نارووال سے تھا۔ وہ سن دوہزار چودہ میں سعودی عرب منتقل ہوئے تھے۔

ڈاکٹر نعیم خالد کی خدمات پر سعودی حکومت اور پاکستانی قونصل جنرل کی جانب سے خراج عقیدت پیش کیا گیا ہے۔ پاکستان میں تعینات سعودی سفیر نواف بن سعید المالکی نے ڈاکٹر نعیم کے حق میں دعائے مغفرت کی ہے۔

ڈاکٹر نعیم خالد کے پسماندگان میں بیوہ اور تین بیٹیاں شامل ہیں۔ ان کی اہلیہ ڈاکٹر طوبیٰ بھی حرا جنرل اسپتال میں ریڈیولوجسٹ ہیں۔ ڈاکٹرنعیم کے انتقال کے بعد اُن کی اہلیہ اور تینوں بیٹیاں بھی قرنطینہ میں ہیں۔

ڈاکٹرطوبیٰ نے سعودی نشریاتی ادارے العربیہ کو بتایا کہ کہ اُن کو اور تینوں بیٹیوں کو بھی کرونا پازیٹو آیا تھا مگر اب علامتیں ختم ہوچکی ہیں اور چاروں کی حالت بہتر ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More