سیالکوٹ کے سرکاری خربوزے

سماء نیوز  |  May 05, 2021

مائی زلیخاں اپنے بیٹے کیلئے افطاری لینے بازار پہنچی تو بہت رش تھا

بیٹے کو آج پہلی تنخواہ ملنی تھی اور ماں کو عمر بھر کی کمائی

مائی نے خربوزے کے سرکاری نرخ پوچھے تو دکاندار بولا ’’بیس روپے کلو‘‘۔

لیکن یہ تو گلا سڑا ہے، اماں بولی

 یہ سرکاری خربوزا ہے ناں، دکاندار آہستہ سے بولا

اتنے میں بازار میں ایک وزیر اور سرکاری افسر کی لڑائی شروع ہوگئی۔

اماں نے جلدی سے وہ پھل اور آنکھوں میں آنسو اٹھائے اور چل پڑی۔

شکر ہے آج سارے سرکاری خربوزے بک گئے، دکاندار بولا۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More