آئی ایم ایف سے کئے وعدوں پر عمل شروع، منی بجٹ کی تیاریاں

بول نیوز  |  Nov 28, 2021

حکومت نے ایک ارب ڈالر سے زائد قرض کے حصول کے لیے آئی ایم ایف سے کئے وعدوں پر عمل شروع کردیا ہے۔

بول نیوز کے مطابق حکومت نے آئی ایم ایف سے کئے گئے وعدے پر عمل درآمد شروع کردیا ہے، اس حکومت چوتھے ترمیمی آرڈیننس کو آئی ایم ایف کے ایماء پر بل کی شکل میں پیش کرے گی، ترمیمی فنانس بل کابینہ کے اگلے اجلاس میں پیش کیا جائے گا، ترمیمی بل کابینہ سے منظوری کے بعد قومی اسمبلی میں منظوری کے لئے پیش کیا جائے گا۔

مجوزہ ترمیمی بل میں حکومت برآمدات کے علاوہ زیرو ریٹنگ سے بھی سیلز ٹیکس چھوٹ واپس لے گی، جن اشیاء پر سیلز ٹیکس چھوٹ زائد ہے اس اسٹینڈرڈ سیلز ٹیکس ریٹ 17 فیصد لاگو ہوگا، اس کے علاوہ مخصوص شعبوں کو حاصل ٹیکس چھوٹ کو بھی ختم کئے جانے کا امکان ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ترمیمی فنانس بل میں شیڈول چھ کو مکمل طور پر ختم کر دیا جائے گا، جس سے 350 ارب روپے کی ٹیکس مراعات ختم ہو جائیں گی، اس طرح موبائل فون، اسٹیشنری اور پیک فوڈ آئٹمز پر ٹیکس چھوٹ ختم کئے جانے کا امکان ہے۔

مجوزہ ترمیمی بل میں رواں مالی سال کے لئے ٹیکس وصولیوں کا ہدف 5829 ارب روپے سے بڑھا کر 6100ارب روپے مقرر کرنے کا تجویز ہے تاہم پٹرولیم ڈویلپمنٹ لیوی کی وصولی کا ہدف 600 ارب روپے سے کم کر کے 356ارب روپے مقرر کیا جائے گا۔ اس کے علاوہ ترقیاتی بجٹ میں 200 ارب روپے کمی کرنے کی تجویز بھی ترمیمی بل کا حصہ ہے۔

واضح رہے کہ چند روز قبل مشیر خزانہ شوکت ترین نے آئندہ ماہ منی بجٹ لانے کا عندیہ دیا تھا۔

Square Adsence 300X250
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More