آسکر ایوارڈ نامزدگیوں پر تنقید مہوش حیات کو مہنگی پڑ گئی

نوائے وقت  |  Jan 15, 2020

 اداکارہ مہوش حیات کو ہالی ووڈ کے معتبر ترین آسکر ایوارڈز کی نامزدگیوں پر تنقید کرنا مہنگا پڑ گیا۔ تفصیلات کے مطابق ہالی وڈڈ کے معتبر ترین آسکر ایوارڈز 2020 کی نامزدگیوں پر تحفظات کا اظہار کیا جس کے بعد اداکارہ کے تمغہ امتیاز حاصل کرنے پر ایک مرتبہ پھر سوال اٹھنے لگے۔ 92 ویں اکیڈمی آسکر ایوارڈزکی تقریب 9 فروری کو امریکی ریاست لاس اینجلس میں منعقد ہوگی۔جس کیلئے گزشتہ روز نامزدگیوں کا اعلان کیا گیا تھا۔ اسی ضمن میں اداکارہ مہوش حیات نے آسکر ایوارڈز 2020 کی نامزدگیوں کے حوالے سے ایک ٹوئٹ کی۔ ٹوئٹ میں مہوش حیات نے لکھا کہ گزشتہ روز آسکر کی نامزدگیوں سے یہ بات ظاہر ہوتی ہے کہ فرق اب بھی ایک بڑا مسئلہ ہے اور مغربی فلم انڈسٹری کو مکمل طور پر شامل ہونے کے لئے بہت طویل سفر طے کرنا ہے۔ انہوں نے اپنے ٹوئٹ میں مزید لکھا کہ اگر اسے کوئی بھی نہیں کرے گا تو شاید اب وقت آگیا ہے کہ ہم قدم اٹھائیں اور اپنی کہانیاں دنیا کو سنائیں۔ اداکارہ کے اس ٹوئٹ پر صارفین کی جانب سے انہیں دیے جانے والے تمغہ امتیاز پر ایک مرتبہ پھر سوال اٹھنا شروع ہوگئے۔ صارفین نے مہوش حیات کے ٹوئٹ پر جواب دیتے ہوئے لکھا کہ اب آپ یہ بتائیں گی کہ ہالی ووڈ کو کس کو نامزد کرنا چاہیے اور کس کو نہیں؟ آپ کو تمغہ امتیاز دیا گیا، یہاں پر آپ سے بھی اچھے لوگ تھے جو اس کے مستحق تھے، کیا اس پر عوام کے ساتھ انصاف کیا گیا؟ آپ سب سے پہلے اداکاری سیکھیں، دوسری چیز یہ کہ آسکرز کے ساتھ پاکستانیوں کا کیا لینا دینا ہے؟ صارفین نے کھری کھری سناتے ہوئے لکھا کہ آسکر ایوارڈ تمغہ امتیاز کی طر ح نہیں ہیں جو آپ کو دوستیوں کی وجہ سے ملا ہے، آپ میرٹ کی بنیاد پر تمغہ امتیاز کی مستحق نہیں تھیں، آپ اوسط اداکاری کی بنیاد پر آسکر حاصل نہیں کر سکتیں، کوئی بھی ایوارڈ حاصل کرنے کے لیے صرف اپنی اداکاری پر ہی اپنی توجہ مرکوز کریں جس کی آپ میں کمی ہے۔ کیونکہ آپ کو بھی میرٹ کی بنیاد پر نامزد نہیں کیا گیا تھا۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More