مشرق وسطی ٰمیں موجود غیر ملکی افواج کو خطرہ ہوسکتا ہے، ایرانی صدر

بول نیوز  |  Jan 15, 2020

ایرانی صدر حسن روحانی نے غیر ملکی افواج کو متنبہ کیا ہے کہ انہیں مشرق وسطیٰ میں خطرے کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

ایرانی صدر حسن روحانی نے ٹیلیویژن پر تبصرے کے دوران    غیرملکی  طاقتوں کومشرق وسطیٰ سے اپنی افواج  کےانخلا کا حکم دیتے ہوئے متنبہ کیا ہے کہ اگر وہ خطے میں رہیں تو انہیں خطرہ ہوسکتا ہے۔

حسن روحانی نے  کوئی وضاحت کیے بغیر کہا  کہ  مشرق وسطیٰ میں آج امریکی فوجی خطرے میں  ہیں ، کل یورپی فوجی  بھی خطرے میں پڑ سکتے ہیں ۔

واضح رہے کہ ایرانی صدر کی جانب سے یہ تبصرہ ایران اور چھ عالمی طاقتوں کے مابین سن 2015 میں طے پانے والے بڑے جوہری معاہدے کی حدود توڑنے پر برطانیہ ، فرانس اور جرمنی  کےتہران کو چیلنج کرنے کے ایک دن بعد سامنے آیا ہے۔

یورپی ممالک نے گذشتہ روز اعلان کیا  تھا کہ وہ ایک طریقہ کار اپنا رہے ہیں تاکہ  ایران کو 2015 میں کیے گئے جوہری معاہدے کے تحت اپنے وعدوں کا احترام کرنے پر مجبور کیا جائے  جس سے امریکی صدر 2018 میں یکطرفہ طور پر پیچھے ہٹ گئے تھے۔

امریکی فوجیوں نے ایرانی حملے کے بعد اڈوں سے ملبہ صاف کردیاخیال رہے کہ یہ پہلا موقع ہے جب ایرانی صدر نے امریکہ کے ساتھ سخت کشیدگی کے دوران یورپی ممالک کو دھمکی دی ہے۔

خیال رہے کہ 3 جنوری کو امریکا نے عراق کے دارالحکومت بغداد میں ایئرپورٹ کے قریب راکٹ حملہ کر کے ایران کی  پاسداران انقلاب فورس کے سربراہ میجر جنرل قاسم سلیمانی کو قتل کر دیا تھا۔

جس کے جواب میں ایران نے  7 اور 8 جنوری کی درمیانی شب میں عراق میں دو امریکی فوجی اڈوں پر راکٹوں سے حملہ کر کے امریکی فوج کا بھاری جانی و مالی نقصان کرنے کا دعویٰ کیا تھا۔

تاہم امریکی صدر نے سماجی رابطے کی ویب سائیٹ ٹوئیٹر پر جاری بیان میں ’سب اچھا ہے‘ کا دعویٰ کرتے ہوئے کہا  تھا کہ وہ جلد ہی اس پر اپنا بیان جاری کریں گے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More