کورونا کاخوف، چین کے ہوٹل میں روبوٹ کھانا پیش کرینگے

سماء نیوز  |  Feb 12, 2020

چین میں کورونا وائرس کا خوف ہر طرف پھیلا ہوا ہے، ایک ہوٹل نے اپنے کسٹمرز کو کھانا پیش کرنے کیلئے روبوٹس کا استعمال شروع کردیا۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق چین کے ایک ہوٹل میں 200 افراد کو قرنطینے میں رکھا گیا ہے، سنگاپور سے ہینگ ژو، چین آنیوالے افراد میں سے 2 کو تیز بخار کی شکایت ہوئی تھی جس کے بعد تمام افراد کو الگ تھلگ رکھنے کا فیصلہ کیا گیا۔

ہوٹل نے احتیاطی تدابیر کے طور پر اپنے تمام مہمانوں کو کھانا پیش کرنے کیلئے روبوٹ استعمال کرنا شروع کردیا، 16 منزلہ عمارت کی ہر منزل پر یہ خدمت اب روبوٹ پیش کررہے ہیں۔ چین کی ژن ہوا نیوز کی ایک ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ ماسک لگائے ہوٹل کے مہمان روبوٹ سے کھانا وصول کرنے کے بعد اپنے کمروں میں جارہے ہیں۔

ژن ہوا نیوز کے مطابق خوفناک وباء کورونا وائرس پھیلنے کے بعد سے چین کی مختلف صنعتوں میں روبوٹ کام کررہے ہیں، ووہان شہر میں بھی خود کار ڈیلیوری روبوٹس کے ذریعے سامان کی ترسیل جاری ہے۔

چین میں تاحال کورونا وائرس سے ہلاک ہونیوالے افراد کی تعداد 1100 سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ تقریباً 45 ہزار افراد متاثر ہیں، یہ مرض امریکا، کینیڈا، ملائیشیا، روس، جاپان، جنوبی کوریا اور برطانیہ سمیت تقریباً 30 ممالک میں پھیل چکا ہے۔

محکمہ صحت کے حکام کے مطابق مرض سے شفایاب ہونیوالوں کا تناسب 1.3 فیصد سے بڑھ کر 10.6 فیصد تک پہنچ چکا ہے۔

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس سے بچاؤ کی ویکسین تیار کرنے میں 18 ماہ تک کا وقت لگ سکتا ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More