وقارذکاء کےقابل اعتراض شو”چیمپئنز” پرپیمرا کی پابندی برقرار

سماء نیوز  |  Apr 10, 2020

پیمرا نے وقار ذکاء کی میزبانی میں بول ٹی وی کے پروگرام “چیمپئنز ” پر پابندی برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے ۔

پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا) کی جانب سے جاری کیے جانے والے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ 20جنوری 2020 کوبول انٹرٹینمنٹ کے پروگرام چیمپیئنز پر قابل اعتراض اور نامناسب مواد نشر کرنے پر پابندی اور 10 لاکھ روپے جرمانہ عائد کیا گیا تھا۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹرپرشیئرکردہ اعلامیے میں مزید کہا گیا ہے کہ چینل نے یہ حکم اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کیا تھا اور متعدد سماعتوں کے بعد ہائیکورٹ نے پیمرا کا موقف تسلیم کرتے ہوئے پروگرام میں نشرکیے جانے والے مواد کونازیبا، قابل اعتراض اورملکی اقدار کے منافی ہونے پرمکمل پابندی عائد کردی۔

اسلام آباد ہائیکورٹ نے بول انٹرٹینمنٹ کو فوری طور پر10 لاکھ روپے جرمانہ کی رقم پیمرا کو جمع کرانے کی ہدایت کی۔

وقار ذکاء کا یہ پروگرام اپنے آڈیشن کے وقت بھی خاصا متنازع قرار پایا تھا اور سوشل میڈیا پر متعدد صارفین نے اس کی نشاندہی بھی کی تھی۔ ٹک ٹاک اسٹار حریم شاہ اور صندل خٹک بھی ان آڈیشنز کا حصہ تھیں۔ پروگرام کیلئے 16 افراد کو منتخب کیا تھا۔

بیباک اور قابل اعتراض چلینجزاورگفتگو پرمبنی یہ پروگرام کرنے والےوقارذکا اس سے قبل دیگر نجی چینلز پر”لِونگ آن دی ایج” (جس کی نوعیت کم وبیش چیمپئنز جیسی ہی تھی) اور “دیسی کڑیاں ” کے نام سے پروگرامز کرچکے ہیں۔

سوشل میڈیا پر تنقید کے باوجود “چیمپئنز ” یو ٹیوب کی ٹرینڈنگ لسٹ میں موجود رہا۔

دوسری جانب وقارذکاء ان دنوں یو ٹیوب پر””ہیڈ فون شو” کررہے ہیں جس میں خاصا بیباک اندازگفتگو دیکھنےمیں آرہا ہے، پروگرام کو لائیو جوائن کرنے والی شناسا خواتین کی جانب سے غیراخلاقی گفتگو اور بیہودہ مذاق کیے جارہے ہیں۔

سماء ڈیجیٹل سے بات کرتے ہوئے وقار ذکاء نے کہا کہپاکستان میں 70 فیصد لوگوں کو چھچھوراپن پسند ہے، اگرایسا ہ ہوتا تو رمضان میں افطار کے وقت گیم شو کی ریٹنگ سب سے زیادہ نہ ہوتی ۔میرا امیج ہمیشہ سے ایسا ہے جو کرتا ہوں وہ سب کے سامنے کرتا ہوں ،اس طرح کے بولڈ اور بے باک شوز کی ڈیمانڈ عوام کرتی ہے اگر میں نہیں کروں گا تو کوئی اور کرے گا۔

انہوں نے کہا کہ میرا شو ٹرینڈنگ نمبر ون آنے کا مطلب یہ ہے کہ عوام یہ دیکھنا چاہتی ہے۔ اس شوکی وجہ سے پہلی بار ” کرپٹوکرنسی کو لیگل کرو” ٹاپ ٹرینڈ میں آیا، اس لیے میں نے یہ رسک لیا کہ میں گندی بات کرکے لوگوں کو اکٹھا کروں اور پھر انہیں ٹیکنالوجی سے متعلق چیزیں بتاؤں۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More