نئے مالی سال کی پہلی سہ ماہی: حکومت نے بینکنگ سیکٹر سے 24 کھرب 60 ارب روپے کے نئے قرضے لینے کا شڈول تیار کر لیا

نوائے وقت  |  Jun 29, 2020

لاہور (کامرس رپورٹر)نئے مالی سال کی پہلی سہ ماہی کے دوران حکومت کی طرف سے قرضوں کی واپسی کے لیے بینکنگ سیکٹر سے 24 کھرب 60 ارب روپے کے نئے قرضے لینے کا شڈول تیار کیا گیا ہے۔سٹیٹ بینک کے مطابق حکومت نے پرانے قرضے واپس کرنے اور دوسرے اخراجات کے لیے تین ماہ کے دوران منی مارکیٹ سے 24 کھرب 60 ارب روپے کے نئے قرضے لینے کا ٹارگٹ رکھا ہے .جولائی سے ستمبر کے اختتام تک حکومت نے مجموعی طور پر 27 کھرب 72 ارب روپے کے اندرونی قرضے واپس کرنے ہیں۔ نئے قرضوں کے لیے حکومت کی طرف سات مرتبہ ٹرثری بلز نیلام کیے جائیں گے جس سے مجموعی طور پر 12 کھرب روپے کے حصول کا ہدف مقرر کیا گیا ہے جبکہ اس دوران مجموعی طور پر 12 کھرب 60 ارب روپے مالیت کے پاکستان انوسٹمنٹ بانڈز فروخت کرنے ٹارگٹ بھی رکھا گیا ہے نئے مالی سال کے دوران حکومت نے بجٹ اخراجات کے لیے بھی شارٹ ٹرم سے زیادہ لانگ ٹرم قرض لینے کی پالیسی بنائی ہے۔ بوئنگ 737 میکس کا طیارہ تجارتی بقا کے لیے پیر سے آزمائشی پروازیں شروع کر سکتا ہے

بوئنگ 737 میکس کا طیارہ تجارتی بقا کے لیے پیر سے آزمائشی پروازیں شروع کر سکتا ہے

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More