کراچی: 10سالہ بچی کا ریپ، لواحقین کی ہنگامہ آرائی

سماء نیوز  |  May 05, 2021

کراچی کے علاقے عیسیٰ نگری میں مبینہ طور پر 10 سالہ بچی کو ریپ کا نشانہ بنایا گیا، جس کے بعد متاثرہ بچی کے اہلخانہ نے ملزم کے گھر پر دھاوا بولا تو علاقہ میدان جنگ بن گیا۔ فائرنگ اور پتھراؤ سے 4 پولیس اہلکاروں سمیت 5 افراد زخمی ہوئے، پولیس نے ملزم کو حراست میں لے لیا۔

کراچی کے علاقے عیسیٰ نگری میں 10 سالہ بچی سے مبینہ ریپ پر اہل خانہ نے ملزم کے گھر پر حملہ کردیا۔ بچی کی والدہ کا کہنا ہے کہ میری بچی پڑھنے کیلئے اس گھر میں جاتی تھی، جہاں ٹیچر کے بھائی نے بچی کو ریپ کا نشانہ بنایا، وزیراعلیٰ سندھ ہمیں انصاف فراہم کریں اور ملزم کو سزائے موت دی جائے۔

رپورٹ کے مطابق لواحقین نے ملزم کے گھر کا گھيراؤ کيا، کچرا جلاکر سڑک بلاک کرنے کی کوشش کی تو پوليس پہنچ گئی، مگر مظاہرين نے پتھراؤ شروع کرديا۔

پوليس کے مطابق پتھراؤ سے 4 اہلکار زخمی ہوگئے جبکہ ايک شخص فائرنگ سے زخمی ہوا۔ مظاہرين نے الزام لگايا کہ فائرنگ پوليس نے کی۔

مظاہرين کو منشتر کرکے مبينہ ریپ کے الزام ميں ايک شخص کو حراست ميں لے ليا گيا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ متاثرہ بچی مبینہ ملزم کی بہن سے ٹیوشن پڑھنے آتی تھی جبکہ زیادتی کی تصدیق کیلئے بچی کا طبی معائنہ کرایا جارہا ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More