بجٹ مراعات، اسٹاک مارکیٹ میں تیزی

سماء نیوز  |  Jun 14, 2021

پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروباری دن کے آغازمیں تیزی دیکھی گئی۔

گزشتہ ہفتے وزیرخزانہ شوکت ترین کی جانب سے بجٹ پیش کرتے ہوئے کیپیٹل گین ٹیکس(ٹیکس جوحصص کی فروخت پر کمائے گئے منافع پردیا جاتا ہے) میں کمی کا اعلان کیا گیا، جس کے بعد اسٹاک مارکیٹ انڈیکس 9 بج کر 33 منٹ پر 48 ہزار 931 پوائنٹس کی سطح پر ٹریڈ کررہا تھا جو کہ گزشتہ 4 سال کی بلند ترین سطح ہے۔

 وزیر خزانہ نے کہا کہ حصص کی فروخت پر کیپیٹل گی ٹیکس کی شرح 15 فیصد سے کم کرکے 12.5 فیصد کردی گئی ہے۔ جس کے بعد اسٹاک مارکیٹ میں فروخت کنندہ کوحصص کی فروخت پر کیپیٹل گین ٹیکس کم دینا ہوگا۔ ٹیکس کی شرح میں کمی کے باعث سرمایہ کاروں کی حوصلہ افزائی ہوئی ہے اور حصص کی خریدوفروخت میں اضافہ ہوا ہے۔

تجزیہ کار رضا جعفری نے سماء ڈیجیٹل سے بات کرتے ہوئے کہا کہ بجٹ میں کیپیٹل گین ٹیکس کی شرح میں کمی کےعلاوہ دوسرے سیکٹرز، دوا سازی کی صنعت، سریے اور کارسازی کی صنعت کو بھی مراعات دی گئی ہیں جن میں دواساز کمپنیوں کو خام مال کی درآمدی پر کسٹم ڈیوٹی کی چھوٹ اور 850 سی سی تک کی گاڑیوں کیلیے سیلز ٹیکس کی شرح میں 4 اعشاریہ 5 فیصد کی کمی اور فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی کی چھوٹ ہے،  جس کے باعث بھی حصص کی خریدوفروخت میں اضافہ ہوا۔

 تجزیہ کار نے مزید کہا کہ  جب تک بجٹ قومی اسمبلی سے منظور نہیں ہوجاتا یہ کہنا قبل از وقت ہےکہ اسٹاک مارکیٹ انڈیکس میں پوائنٹس کا اضافہ کس حد تک ہوگا۔ اگر بجٹ منظور ہوجاتاہے تو اسٹاک مارکیٹ اگلے 6 ماہ میں 55 ہزار پوائنٹس کی سطح پر ٹریڈ کرے گی۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More