کرپٹوکرنسی کو غیرقانونی قرار دیکر جان چھڑانا اب آسان نہیں

سماء نیوز  |  Oct 22, 2021

بلاک چین ٹیکنالوجی کی بنیاد پر پہلی ڈیجٹل کرنسی ”بٹ کوائن“ 09-2008ء میں متعارف کرائی گئی تو کسی نے اسے اہمیت نہیں دی، اپریل 2011ء میں اس کی قیمت بمشکل ایک ڈالر تک پہنچی اور آج تقریباً 10 سال بعد ایک بٹ کوائن 66 ہزار ڈالر کا ہوچکا ہے، جو بٹ کوائن کی تاریخی بلند ترین سطح ہے۔

اگر پاکستانی کرنسی میں دیکھا جائے تو 2020ء میں 19 لاکھ 20 ہزار روپے کا ایک بٹ کوائن اب ایک کروڑ 12لاکھ روپے کا ہوچکا ہے۔

امریکا، ترکی، بھارت اور چین سمیت کئی ممالک اسے غیر قانونی قرار دے چکے ہیں پھر بھی کرپٹو کی ٹریڈنگ نہیں روک پارہے اور اب دنیا بھر میں اس سے سرکاری سطح پر فائدہ اٹھانے کیلئے حکمت عملی بنائی جارہی ہے۔

پاکستان میں بھی سندھ ہائیکورٹ نے بدھ کو سماعت میں کرپٹو کی قانونی یا غیر قانونی حیثیت کا جائزہ لینے کیلئے وفاقی سیکریٹری خزانہ کی سربراہی میں ایک کمیٹی تشکیل دی ہے جو 3 ماہ میں رپورٹ مرتب کرے گی۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More