امید ہے امریکہ افغانستان سے امداد کا وعدہ پورا کرے گا، روس

بول نیوز  |  Oct 25, 2021

روس کے صدارتی ایلچی برائے افغانستان ضمیر کابلوف نے کہا ہے کہ امید ہے امریکہ افغانستان سے امداد کا وعدہ پورا کرے گا۔

تفصیلات کے مطابق روس کے صدارتی ایلچی برائے افغانستان ضمیر کابلوف نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ماسکو واشنگٹن پر بھروسہ کررہا ہے کہ وہ افغانستان کے ساتھ سماجی و اقتصادی امداد کے اپنے وعدے کو پورا کرے گا۔

ضمیر کابلوف نے کہا کہ ہم توقع کرتے ہیں کہ امریکا ان وعدوں کو پورا کریں گا اور ٹروئیکا کے ساتھ مل کر کام کریں گا بلکہ وسیع تر معنوں میں علاقائی طاقتوں کے ساتھ بڑے پیمانے پر افغانستان میں قیام امن کے لئے مل کر کام کریں گا۔

روس کے صدارتی ایلچی برائے افغانستان ضمیر کابلوف کا مزید کہنا تھا کہ روس نے افغانستان کے بحران پر فرانسیسی ہم منصب سے بھی مشاورت کی ہے جبکہ جرمنی کے افغان ایلچی سے بھی ملاقات کی جائے گی۔

واضح رہے کہ امریکا نے افغان حکومت پر دہشت گردی کے خدشات دور کرنے کے لئے 10 اکتوبر کو ملاقات کی تھی جس میں امریکی وفد نے اپنے شہریوں سمیت دیگر غیرملکی اور وہ افغان جو جنگ زدہ ملک چھوڑ کر باہر جانا چاہتے ہیں جیسے مختلف امور پر بات ہوئی جبکہ افغان معاشرے کے مختلف شعبوں میں خواتین کی شرکت کے لیے محفوظ راستہ قائم کرنے پر بھی زور دیا گیا۔

ملاقات پر واشنگٹن کا کہنا تھا کہ امریکا کی جانب سے براہ راست افغان عوام کو مضبوط انسانی امداد کی فراہمی کے بارے میں تبادلہ خیال ہوا جبکہ اس امداد کی فراہمی کا یہ مطلب ہرگز نہیں کہ امریکا نے طالبان کی حکومت کو تسلیم کر لیا ہے۔

دوسری جانب طالبان گروپ کے ایک ترجمان سہیل شاہین نے خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹیڈ پریس سے بات چیت میں کہا تھا کہ طالبان حکومت کے عبوری وزیر خارجہ نے امریکی نمائندوں کو بتایا تھا کہ طالبان اپنی اس بات پر اب بھی قائم ہیں کہ وہ اپنی سر زمین کسی دوسرے ملکوں پر حملہ کرنے کے لیے استعمال ہونے کی اجازت نہیں دیں گے۔

Adsence 300X250
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More