دنیا کی جدیدترین ٹیلی اسکوپ کی لانچ ملتوی کردی گئی

سماء نیوز  |  Nov 24, 2021

اربوں سال پرانے ستاروں اور کہکشاں دیکھنے کیلئے بنائی گئی دوربین ’جیمز ویب اسپیس ٹیلی اسکوپ‘ کی لانچ ملتوی کردی گئی۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق یہ ٹیلی اسکوپ اپنی نوعیت کی سب سے بڑی دوربین ہوگی، اس کی مدد سے محققین 13 ارب 50 کروڑ سال پہلے کے ستارے اور کہکشاں دیکھنے کی کوشش کریں گے، یعنی وہ ستارے اور کہکشاں جو بگ بینگ کے کچھ کروڑوں سال بعد بنے۔

امریکی خلائی ایجنسی ناسا نے بتایا ہے کہ جیمز ویب اسپیس ٹیلی اسکوپ میں تکنیکی مسئلے کے باعث اس کی لانچ 22 دسمبر تک ملتوی کردی ہے۔

تکنیکی ماہرین 10 ارب ڈالر کی ’جیمز ویب اسپیس ٹیلی اسکوپ‘ کو لانچ وہیکل ایڈاپٹر پر نصب کرنے کی کوشش کررہے تھے، تاہم اس دوران ٹیلی اسکوپ اور لانچ وہیکل ایڈاپٹر کو ایک دوسرے سے جوڑے رکھنے والا ایک بینڈ غیر متوقع طور پر نکل گیا۔

ناسا کے مطابق اس کی وجہ سے ’جیمز ویب اسپیس ٹیلی اسکوپ‘ کے پورے نظام میں تھرتھراہٹ شروع ہوگئی، یہ کام فرانسیسی کمپنی ایئرین اسپیس کے زیر نگرانی کیا جارہا تھا، ٹیلی اسکوپ کو لانچ کرنے کی ذمہ داری اسی کمپنی کو دی گئی ہے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ناسا کی ٹیم اب معاملے کی تحقیقات کررہی ہے اور یہ پتہ لگانے کیلئے تجربے کئے جا رہے ہیں کہ تھرتھراہٹ کی وجہ سے ٹیلی اسکوپ میں کوئی خرابی پیدا ہوئی ہے یا نہیں۔

واضح رہے کہ اس ٹیلی اسکوپ کو 18 دسمبر کو لانچ کیا جانا تھا، تاہم اب لانچ میں صرف کچھ ہی دنوں کی تاخیر آئی ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More