نادرا کا بائیومیٹرک ڈیٹا ہیک نہیں ہوا، ایف آئی اے کا دعویٰ غلط: ترجمان

اردو نیوز  |  Nov 25, 2021

پاکستان کی نیشنل ڈیٹابیس رجسٹریشن اتھارٹی (نادرا) نے اپنا ڈیٹابیس ہیک ہونے کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس حوالے سے وفاقی تحقیقاتی ایجسنی (ایف آئی اے) کا دعویٰ غلط فہمی پر مبنی ہے۔

جمعرات کو ایف آئی اے کے ایڈیشنل ڈائریکٹر طارق پرویز نے قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی کے سامنے نادرا کا بائیو میٹرک ڈیٹا ہیک ہونے کا انکشاف کیا تھا۔

اس حوالے سے نادرا کے ترجمان فائق علی چاچڑ نے اردو نیوز کو بتایا کہ عوام کا بائیومیٹرک ڈیٹا مکمل طور پر محفوظ ہے۔

انہوں نے ایف آئی اے کے بائیومیٹرک ڈیٹا کے ہیک ہونے سے متعلق بیان کو غلط فہمی اور ناسمجھی پر مبنی قرار دیا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ نادرا نے ایف آئی اے سے غیر ضروری اور غلط بیانی پر وضاحت طلب کرلی ہے۔

واضح رہے وفاقی تحقیقاتی ادارے کے ایڈیشنل ڈائریکٹر نے قائمہ کمیٹی کو بتایا تھا کہ نادرا کا ڈیٹا ہیک ہونے کے سبب مسائل میں اضافہ ہوا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ جب مالی فراڈ کے کیسز میں جب ایف آئی اے کارروائی کرتا ہے تو بوڑھا شخص یا خاتون پکڑی جاتی ہے۔

اس حوالے سے انہوں نے مزید کہا تھا کہ سائبر کرائم کے حوالے سے ایف آئی اے کے پاس 89 ہزار شکایات آئی ہیں اور ان واقعات کی تحقیقات کے لیےایف آئی اے کے پاس 162 آئی ٹی ایکسپرٹس ہیں۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More