این اے133ضمنی الیکشن: غيرحتمی نتائج کےمطابق ن لیگ کو برتری حاصل

سماء نیوز  |  Dec 05, 2021

فائل فوٹو

لاہور کے حلقے این اے 133 میں ضمنی انتخاب کے لیے پولنگ کے وقت کا آغاز آج بروز اتوار 5 دسمبر کو صبح 8 بجے ہوا، جو بغیر کسی وقفے کے شام 5 بجے تک جاری رہا۔

این اے 133 کے ضمنی الیکشن کے 8 پولنگ اسٹیشنز کے غيرحتمی اور غيرسرکاری نتائج کے نتائج کے مطابق مسلم لیگ کے امیدوار شائستہ پرویز ملک کو برتری حاصل ہے۔

ابتدائی نتائج کے مطابق شائستہ پرویز ملک 761 ووٹ لیکر آگے  جبکہ ان کے مدمقابل پیپلز پارٹی کے امیدوار اسلم گل 341 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

مسلم لیگ ن کی شائستہ پرویز ملک اور پیپلز پارٹی کے چوہدری اسلم گِل سمیت 11امیدوار اس حلقے کی سیٹ کیلئے میدان میں موجود ہیں۔

الیکشن کمیشن کے مطابق اس موقع پر سیکیورٹی کے لیے 2 ہزار سے زائد پولیس اہلکار تعینات کیے گئے ہیں، جب کہ رینجرز اہلکار گشت کریں گے۔

الیکشن کمیشن نے پریذائیڈنگ افسران کو ہدایات جاری کی ہیں کہ وہ فارم 45 کی تصویر کھینچتے وقت موبائل پر اپنی لوکیشن آن رکھیں گے۔ پریزائڈنگ افسران فوراً ریٹرننگ افسر کو وائٹس ایپ پر پولنگ ایجنٹس کی موجودگی میں فارم 45 بھیجیں گے۔

واضح رہے کہ این اے 133 لاہور کی نشست مسلم لیگ نون کے ایم این اے محمد پرویز ملک کے انتقال کے باعث خالی ہوئی تھی۔

ضمنی الیکشن کے سلسلے میں گورنمنٹ گریجویٹ کالج فار ویمن ٹاؤن شپ میں ابتدا میں پولنگ اسٹیشن پر پولنگ تاخیر کا شکار ہوئی۔ گورنمنٹ گریجویٹ کالج فار ویمن ٹاؤن شپ کے پولنگ اسٹیشن پر پولنگ کے آغاز کے 2 گھنٹے تک کوئی ووٹر ووٹ ڈالنے نہیں پہنچا۔

حلقے ميں کل ووٹرز کی تعداد 4لاکھ چالیس ہزار485 ہے، جب کہ 254 پولنگ اسٹیشنز قائم کیے گئے ہیں۔ جمشيد اقبال چيمہ کے کاغزات نامزدگی مسترد ہونے کی وجہ سے پی ٹی آئی ڈور سے باہر ہوگئی۔ مسلم ليگ ن کے رہنماوں سعد رفيق اورعطا تارڑ کہتے ہيں کہ پی ٹی آئی خود الیکشن سے بھاگی کیونکہ ان کی ضمانت ضبط ہوجاتی۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More