کولنگ ووڈ انگلینڈ کی وائٹ بال ٹیم  کے کوچ کے لئے مضبوط امیدوار

بول نیوز  |  May 15, 2022

کرس سلور ووڈ اور جو روٹ کے اپنے اپنے عہدوں سے دستبردار ہونے کے بعد، انگلینڈ کی انتظامیہ نے پرفارمنس میں کمی کو دور کرنے کے لیے مزید اقدامات کیے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق  بین اسٹوکس کو ٹیسٹ ٹیم کی باگ ڈور سونپی گئی ہے جبکہ برینڈن میک کولم کو کوچ بنایا گیا ہے۔

انگلینڈ اپنی وائٹ بال ٹیم کے لیے کوچ کی تلاش میں ہے اور وہ تمام اہم کردار کے لیے پال کولنگ ووڈ کو پنسل کرنے کی کوشش میں ہے۔

 کولنگ ووڈ اس سے قبل کوچنگ کے عہدوں پر ٹیم کے ساتھ رہ چکے ہیں اور ان کا تجربہ جدوجہد کرنے والی ٹیم کے لیے کارآمد ثابت ہو سکتا ہے۔

ایک رپورٹ کے مطابق انگلینڈ کی ٹیم کے نئے تعینات ہونے والے منیجنگ ڈائریکٹر روب کی جلد ہی اس کا اعلان کریں گے۔

کولنگ ووڈ نے انگلینڈ کے آخری دورہ ویسٹ انڈیز کے دوران عبوری کوچ کے طور پر خدمات انجام دیں، پانچ ٹی ٹوئنٹی اور تین ٹیسٹ کے لیے کرس سلور ووڈ کی جگہ کولنگ ووڈ کی خدمات حاصل کی گئیں۔

آسٹریلیا کے ہاتھوں ایشز کی شکست کے بعد، انگلینڈ کو ویسٹ انڈیز کے ہاتھوں شکست ہوئی،  ٹی ٹوئنٹی سیریز اور ٹیسٹ سیریز بھی ہار گئی۔

مزید پڑھیں2 hours agoاینڈریو سائمنڈز کے انتقال پر ملکی و غیر ملکی کھلاڑیوں کا اظہار افسوس

سابق آسٹریلوی کھلاڑی اینڈریو سائمنڈز کے انتقال پر ملکی و غیر ملکی...

4 hours agoسابق آسٹریلوی کھلاڑی اینڈریو سائمنڈز کے کیریئر پر ایک نظر

آسٹریلیا کے سابق آل راؤنڈر اینڈریو سائمنڈز گذشتہ روز کار حادثے میں...

6 hours agoایشیا کپ ہاکی ٹورنامنٹ کے شیڈول کا اعلان

ایشیا کپ ہاکی ٹورنامنٹ کے شیڈول کا اعلان کر دیا گیا ہے۔...

7 hours agoاینڈریو سائمنڈز ٹریفک حادثے میں ہلاک

سابق آسٹریلوی کرکٹر اینڈریو سائمنڈ کی کار ٹریفک حادثے کا شکار ہوئی...

18 hours agoآندرے رسل کے آئی پی ایل میں دو ہزار رنز مکمل

انڈین پریمئیر لیگ کے اہم میچ میں آل راؤنڈر آندرے رسل نے...

18 hours agoراولپنڈی اور کراچی کے اسٹیڈیمز میں جدید ترین کرسیاں لگیں گی، چیئرمین پی سی بی

پاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی) کے چیئرمین رمیز راجہ نے اعلان کیا...

تازہ ترین نیوز پڑہنے کے لیے ڈاؤن لوڈ کریں بول نیوزایپ

General Rectangle – 300×250
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More