انڈیا کا وہ گینگ جو 8 ماہ تک ’جعلی پولیس سٹیشن‘ چلاتا رہا

اردو نیوز  |  Aug 19, 2022

انڈیا میں ایک ایسا گینگ پکڑا گیا ہے جس نے پولیس افسروں کا روپ دھار کر آٹھ مہینے جعلی پولیس سٹیشن چلایا اور لوگوں سے پیسے بٹورے۔

فرانسیسی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کے مطابق خود کو پولیس افسر یا اہلکار ظاہر کر کے فراڈ کے واقعات انڈیا میں عام ہیں۔

ڈی سی سریواستو نے اے ایف پی کو بتایا کہ ’ریاست بہار میں اس گروہ نے اصل مقامی پولیس افسر کے گھر سے بمشکل 500 میٹر کے فاصلے پر جعلی پولیس سٹیشن قائم کیا، رینک کے بیجز والی وردی زیب تن کی اور بندوقیں اٹھا لیں۔‘

اس کے بعد وہ جعلی سٹیشن میں آنے والے مقامی لوگوں سے شکایت اور مقدمات درج کروانے کے لیے رقم وصول کرنے لگے جبکہ دیگر سے محفوظ رہائش اور پولیس میں ملازمتیں حاصل کرنے میں تعاون کا وعدہ کر کے نقد رقم حاصل کرنے لگے۔

لیکن اس فراڈ کا عقدہ اس وقت کھُلا جب ایک اصلی پولسی افسر نے گینگ کے دو کارندوں کو ادارے کی جانب سے جاری کردہ ہتھیاروں کے بجائے مقامی ورکشاپ میں بنی بندوقیں خریدتے دیکھا۔

سریواستو نے اے ایف پی کو بتایا کہ ’دو خواتین سمیت گینگ کے کم از کم چھ ارکان کو گرفتار کیا گیا ہے لیکن اس گینگ کا سرغنہ تاحال فرار ہے۔‘

سریواستو نے کہا کہ ’معاملے کی تفتیش جاری ہے۔ مزید معلومات سامنے آئیں گی۔‘

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More