سائفر آڈیو لیک، عمران خان کو ایف آئی اے میں طلبی کے نوٹس معطل

اردو نیوز  |  Dec 06, 2022

لاہور ہائیکورٹ نے سائفر آڈیو لیک معاملے پر تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کو ایف آئی اے کی جانب سے طلبی کے لیے جاری کیے گئے نوٹس معطل کر دیے ہیں۔

منگل کو جسٹس اسجد جاوید گرال نے عمران خان کی درخواست پر ابتدائی سماعت کے بعد عدالت نے وفاقی تحقیقاتی ایجنسی (ایف آئی اے) کو جواب دینے کے لیے نوٹس جاری کیا۔

عمران خان کے وکیل سلمان صفدر نے دلائل میں کہا کہ وزیراعظم کے دفتر سے آڈیو کا لیک ہونا افسوسناک ہے۔ ’ایف آئی اے نے انٹرنیٹ سے آڈیو اٹھا کر خود سے تفتیش شروع کر دی۔

جسٹس اسجد جاوید نے کہا کہ پہلے تو آڈیو کا فرانزک ہونا چاہیے تھا کہ اصل ہے بھی یا نہیں۔ ’کیا اس بات کی انکوائری کی گئی کہ سائفر والی آڈیو کیسے لیک ہوئی۔‘

عدالت نے پوچھا کہ ’جن لوگوں کا وہاں کنٹرول تھا کیا اُن سے یہ تفتیش ہوئی کہ آڈیو کیسے لیگ ہوئی۔ دیگر لوگوں سے بھی پوچھ گچھ کی گئی یا صرف سابق وزیراعظم کو ٹارگٹ کیا گیا۔‘

عمران خان کے وکیل نے بتایا کہ شاہ محمود قریشی سمیت دیگر افراد کے خلاف بھی انکوائری شروع کی گئی ہے۔

وفاقی حکومت کے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ پہلے ایف آئی اے کو نوٹس جاری کر کے اُن کا مؤقف سن لیا جائے اس کے بعد نوٹس کی معطلی کی درخواست پر فیصلہ کیا جائے۔

عدالت نے عمران خان کو طلبی کے لیے جاری کیے گئے نوٹس معطل کرتے ہوئے مقدمے کی مزید سماعت 19 دسمبر تک ملتوی کر دی۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More