اخبارمیں شائع عجیب وغریب اشتہارجسے 6فٹ کے فاصلے سے ہی پڑھناممکن ہے قریب سے کیوں نظر نہیں آتا؟کورونا وائرس سے متعلق اس دلچسپ اشتہار میں کیا ل

روزنامہ اوصاف  |  Aug 05, 2020

دنیا بھر میں 42 لاکھ سے زائد افراد کو متاثر کرنے والی کورونا وائرس کی وبا سے بچاؤ کے لیے جہاں ماہرین صحت لوگوں کو ایک دوسرے سے سماجی فاصلہ اختیار کرنے کی ہدایات کرتے دکھائی دیتے ہیں۔وہیں یورپی ملک فن لینڈ کے ایک اخبار نے بھی لوگوں کو سماجی فاصلوں کی اہمیت سمجھانے کے لیے ایک منفرد قسم کا اشتہار شائع کیا، جسے اس وقت ہی درست طریقے سے پڑھا جا سکتا ہے جب پڑھنے والا اشتہار سے کم از کم 6 فٹ کے فاصلے پر ہو۔جی ہاں، فن لینڈ کے اخبار ہلسنگن سنومات (Helsingin Sanomat) نے ایک ایسا منفرد اشتہار شائع کیا، جسے قریب سے پڑھنا ناممکن ہے۔ڈیجیٹل ایڈورٹائزنگ ادارے دی اسٹیبل کے مطابق فن لینڈ کے اخبار نے پورے صفحے پر آپٹیکل الوژن کے تحت جدید وژوئل طریقے استعمال کرتے ہوئے ایک ایسا منفرد اشتہار شائع کیا جسے قریب سے پڑھا نہیں جا سکتا۔فینش، روسی اور انگریزی زبان میں شائع ہونے والے اخبار نے اپنے انگریزی زبان کے اخبار کے ایک مکمل صفحے پر سماجی فاصلوں کی اہمیت سے متعلق مذکورہ منفرد اشتہار شائع کیا گیا۔اشتہار میں اخبار نے لوگوں کو ایک دوسرے سے فاصلے پر رہنے کی ہدایت کی اور بتایا کہ ایک دوسرے سے دور رہنے میں ہی سب محفوظ رہ سکیں گے۔مذکورہ اشتہار کی اشاعت میں اخبار انتظامیہ نے ایسی تکنیک استعمال کی جس کی بدولت کوئی بھی شخص مذکورہ اشتہار کو قریب سے پڑھ نہیں سکتا اور ایسا کرنے پر قریبی شخص کو اشتہار کے الفاظ نظر آنے کے بجائے صرف وژوئلز نظر آتے ہیں۔تاہم اسی اشتہار کو 6 فٹ کی دوری سے پڑھنے پر نہ صرف اشتہار کے الفاظ واضح طور پر دکھائی دیے بلکہ لوگوں کو اشتہار پڑھنے میں بھی آسانی ہوئی۔اخبار کی جانب سے منفرد اشتہار کو شائع کرنے کے حوالے امریکی ادارے نیمان لیب نے بھی ٹوئٹ کی اور پھر پوری دنیا میں اخبار کے اشتہار پر باتیں کی جانے لگیں اور اخبار کے اچھوتے خیال کو سراہا گیا۔اخبار انتظامیہ کے مطابق اگرچہ ماہرین صحت بھی سماجی فاصلوں کی ہدایات کر رہے ہیں اور فن لینڈ میں زیادہ تر لوگ ان ہدایات پر عمل بھی کر رہے ہیں تاہم اس کے باوجود بہت سارے لوگ ان ہدایات پر عمل نہیں کر رہے تھے جس وجہ سے اخبار نے اچھوتا اشتہار شائع کرنے کا فیصلہ کیا۔خیال رہے کہ فن لینڈ میں 13 مئی کی دوپہر تک کورونا سے محض 6 ہزار افراد متاثر ہوئے تھے اور وہاں وبا سے ہلاکتوں کی تعداد 275 تک جا پہنچی تھی۔مجموعی طور پر 13 مئی کی دوپہر تک دنیا بھر میں کورونا سے متاثرہ افراد کی تعداد 42 لاکھ 60 ہزار سے زائد جب کہ ہلاکتوں کی تعداد 2 لاکھ 92 ہزار کے قریب جا پہنچی تھی۔A Finnish newspaper ran a print ad that can only be read from six feet away. https://t.co/xO4KqVJmar pic.twitter.com/WkEQCbkawP

— Nieman Lab (@NiemanLab) May 11, 2020
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More