شاہین کا انجری سے بحالی کا سفر جاری، ’کافی اچھا محسوس کر رہا ہوں‘

اردو نیوز  |  Dec 08, 2022

پاکستان کرکٹ ٹیم کے فاسٹ بولر شاہین شاہ آفریدی گھٹنے کی انجری کے بعد تیزی سے صحت یاب ہو رہے ہیں۔

جمعرات کو سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کی جانب سے شاہین شاہ آفریدی کی فٹنس کے بارے میں ایک ویڈیو اپلوڈ کی گئی ہے۔

ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ شاہین شاہ آفریدی پی سی بی کے نیشنل ہائی پرفارمنس سینٹر (این ایچ پی سی) میں مختلف قسم کی ورزش کر رہے ہیں۔

اس موقع شاہین شاہ آفریدی کہتے ہیں کہ ’تین چار دن ہو گئے ہیں صحت کی بحالی کا عمل شروع ہوا ہے، کافی اچھا محسوس کر رہا ہوں، واپس آ کر جِم، سائیکلنگ اور ٹریننگ کر رہا ہوں۔ امید ہے کہ گراؤنڈ میں جلدی واپس آؤں گا۔‘

Upbeat and on the road to recovery @iShaheenAfridi continues his rehabilitation at NHPC, Lahore. pic.twitter.com/oBsbApxU2x

— Pakistan Cricket (@TheRealPCB) December 8, 2022

فاسٹ بولر نے مداحوں کے بارے میں کہا کہ ’جو ہمارے ٹیسٹ میچ جا رہے ہیں، جیسے پنڈی میں مداحوں نے پاکستان ٹیم کو سپورٹ کیا ہے، ویسے سپورٹ کریں۔‘

Captionواضح رہے کہ شاہین آفریدی رواں سال جولائی میں سری لنکا کے خلاف گال میں کھیلے جانے والے ٹیسٹ میچ کے دوران ڈائیو لگاتے ہوئے گھٹنے کی انجری کا شکار ہوگئے تھے۔

گھٹنے کی انجری کے باعث شاہین شاہ آفریدی ایشیا کپ، پاکستان کی انگلینڈ کے خلاف ٹی20 سیریز اور نیوزی لینڈ میں کھیلی گئی سہ ملکی سیریز سے باہر ہوگئے تھے۔

شاہین شاہ آفریدی آسٹریلیا میں کھیلے گئے ٹی20 ورلڈ کپ میں ٹیم میں واپس آئے لیکن ورلڈ کپ میں بھی وہ مکمل طور پر فِٹ نہیں تھے تاہم اس کے باوجود ان کی ایونٹ میں کارکردگی نہایت عمدہ رہی۔

ٹی20 ورلڈ کپ کے فائنل میں ایک مرتبہ پھر وہ انجری کا شکار ہو گئے تھے جس کے بعد انہیں انگلینڈ کے خلاف ہوم ٹیسٹ سیریز میں سکواڈ میں شامل نہیں کیا گیا۔

پی سی بی کی شاہین شاہ آفریدی کے بارے میں اس ٹویٹ کے بعد صارفین کی جانب سے تبصرے بھی کیے جا رہے ہیں۔

آئینہ دعا نے ایک ٹویٹ میں کہا کہ ’امید کرتی ہوں کہ اب یہ (پی سی بی) لوگ جلد بازی سے کام نہیں لیں گے اور اسے مکمل طور پر ٹھیک ہونے دیں گے۔ آپ کو شاہین شاہ جیسے بولرز روز روز نہیں ملتے، ڈھیر ساری دعائیں۔‘

اریبہ کا کہنا تھا کہ ’ہم شاہین کی طرف سے بھرپور واپسی دیکھیں گے۔‘

محمد اسد نے نے کہا کہ ’فیلڈ میں ان کی بہت کمی محسوس ہو رہی ہے۔‘

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More