کشمیریوں سے اظہار یکجہتی: آج یوم استحصال ، پاکستان کا سیاسی نقشہ جاری، پورا کشمیر شامل

نوائے وقت  |  Aug 05, 2020

اسلام آباد+لاہور (وقائع نگار خصوصی‘ نیوز رپورٹر‘سٹاف رپورٹر‘خصوصی نامہ نگار)اسلام آباد میں پارلیمنٹ ہائوس میں یوم استحصال سے متعلق تقریب منعقد ہوئی۔ پارلیمنٹ ہائوس کو تھری ڈی لائٹس سے سجادیا گیا۔ تھری ڈی پراجیکٹر کے ذریعے کشمیر میں ہونے والے بھارتی مظالم کو اجاگر کیا گیا ہے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین کشمیر کمیٹی شہریار آفریدی نے کہا کہ بھارت نے جو مظالم ڈھائے ہیں وہ پوری دنیا دیکھ چکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ سینٹ اور قومی اسمبلی قوم کی آواز ہے۔ مسئلہ کشمیر حل نہ ہوا تو بہت مشکلات پیدا ہوجائیں گی۔ مودی کا اصل چہرہ دنیا کے سامنے رکھ رہے ہیں۔ دنیا خاموش رہی تو پورے خطے کا امن خطرے میں پڑ سکتا ہے۔ شہریار آفریدی نے کہا کہ کشمیر پر کبھی سمجھوتہ نہیں ہوسکتا ہے۔ وزیراعظم کی زیرصدارت کابینہ اجلاس میں یوم استحصال کشمیر کی تیاریوں پر کابینہ کو بریفنگ دی گئی۔ اس موقع پر وزیراعظم عمران نے کہا کہ آرٹیکل370 ختم کرکے بھارت نے اپنے غیر قانونی قبضے والے جموں و کشمیر کو کھلی جیل میں بدل دیا ہے۔ وہاں آٹھ لاکھ بھارتی فوجی تعینات ہیں، ایک سال میں کشمیر کی معیشت کو تباہ کردیا گیا۔ بعد ازاں پاکستان کے نئے سرکاری نقشے کی تقریب رونمائی سے خطاب میں وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ کشمیر کو پاکستان کا حصہ بنانے کیلئے یہ نقشہ ایک پہلا قدم ہے، جب تک میں زندہ ہوں کشمیر کے لیے جدوجہد جاری رہے گی۔ انہوں نے کہا کہ نیا نقشہ پاکستان کے لوگوں کی امنگوں کی ترجمانی کرتا ہے، اب یہی پاکستان کا آفیشل نقشہ ہے‘ تمام کشمیری قیادت‘ تمام اپوزیشن اور ملکی قیادت نے نئے نقشے کی تائید کی ہے۔ وزیراعظم نے کہا کہ بھارت نے جو 5 اگست کو اقدام اٹھایا یہ نقشہ اس کی نفی کرتا ہے، مسئلہ کشمیر کا ایک ہی حل ہے کہ اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ میری زندگی کا تجربہ ہے کہ منزل پر پہنچنے سے پہلے انسان ایک تصور کرتا ہے، جو بھی خواب دیکھتا تھا اس کا پہلے ذہن میں سوچتا تھا۔ آج سے سارے پاکستان میں یہ آفیشل نقشہ ہوگا۔ وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ کشمیر کا مسئلہ ہر فورم پر اٹھائیں گے، عالمی برادری اپنا وعدہ پورا کرے۔ کشمیریوں کو ان کا حق ابھی تک نہیں ملا۔ واضح کر دوں کشمیر کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق ہونا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ مجھے یقین ہے کہ اپنی منزل پر ضرور پہنچیں گے۔ جب تک زندہ ہوں، کشمیر کی آزادی کے لیے جدوجہد جاری رہے گی، انشاء اللہ جلد منزل پر پہنچیں گے۔ میرا تجربہ ہے کہ پہلے تصور، پھر منزل تک پہنچا جاتا ہوں۔ کشمیر پاکستان کا حصہ بنے گا، یہ نقشہ پہلا قدم ہے وزیراعظم نے کہا کہ آج سے سارے پاکستان میں پاکستان کا سرکاری نقشہ وہی ہوگا جس کو آج وفاقی کابینہ نے منظور کیا ہے'۔انہوں نے کہا کہ 'اب سے یہ اسکولوں، کالجوں اور عالمی سطح پر پاکستان کا یہ نقشہ آیا کرے گا'۔مسئلہ کشمیر سے متعلق انہوں نے کہا کہ 'میں پھر سے واضح کردوں کہ کشمیر کا صرف ایک حل ہے، وہ حل اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں میں ہے، جو کشمیر کے لوگوں کو حق دیتی ہیں کہ ووٹ کے ذریعے فیصلہ کریں کہ وہ پاکستان یا بھارت کے ساتھ جانا چاہتے ہیں'۔عمران خان نے کہا کہ 'یہ حق انہیں عالمی بر

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More