پشاور،کراچی ،کوئٹہ ،اسلام آبادمیں مارکیٹیں ،بنگلے اورسینکڑوں کنال زرعی اراضی ،مولاناکتنے اثاثوںکے مالک نکلے ،تفصیلات سامنے آگئیں

روزنامہ اوصاف  |  Sep 27, 2020

اسلام آباد(ویب ڈیسک )جے یو آئی ف کے امیر مولانا فضل الرحمن کے اثاثوں کی تحقیقات میں اہم پیشرفت سامنے آئی ہے، نیب نے اثاثوں کی ابتدائی معلومات حاصل کر لیں۔تفصیلات کے مطابق آمدن سے زائد اثاثوں میں مولانا فضل الرحمن کے خلاف نیب نے تحقیقات شروع کی ہوئی ہیں، ان کے قریبی ساتھی موسیٰ خان کو بھی نیب نے کچھ روز قبل گرفتار کیا تھا۔دوسری جانب مولانا فضل الرحمن کے اثاثوں کی تحقیقات میں اہم پیشرفت سامنے آئی ہے، نیب کو ے اثاثوں اہم ابتدائی معلومات مل گئیں جن کے مطابق فضل الرحمان بنگلے، سینکڑوں کنال زرعی اراضی و دکانوں کے مالک نکلے۔فضل الرحمٰن کی ڈیرہ اسماعیل خان میں سینکڑوں کنال اراضی ہے جبکہ مولانا کا ایف 8 اسلام آباد میں بنگلہ، پشاور، کراچی اور کوئٹہ میں مارکیٹیں بھی شامل ہیں،جبکہ مولانا فضل الرحمان کے اثاثوں میں چک شہزاد اسلام آباد میں 3 ارب مالیت کی زمین بھی ہے جسے حال ہی میں فروخت کیا گیاواضح رہے کہ کچھ سال بعد انصارعباسی نے مولانا فضل الرحمان پر الزام لگایا تھا کہ انہوں نے ڈیرہ اسماعیل خان میں سرکاری زمین اپنے نام الاٹ کرالی ہے۔انصار عباسی کا الزام تھا کہ مولانا فضل الرحمان اور انکے 6 قریبی ساتھیوں کو 1200 کنال ڈیرہ اسماعیل خان میں فوج نے الاٹ کی۔مولانا فضل الرحمان اور انکے ساتھی تردید کرتے رہے لیکن انصارعباسی نے چیلنج کیا تھا کہ وہ انہیں عدالت میں لیکر جائیں، دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہوجائے گا لیکن جے یو آئی (ف) کا کوئی رہنما انصار عباسی کے خلاف عدالت نہیں گیا
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More