خواجہ سرا کو مرد پولیس اہلکار گرفتار نہیں کر سکے گا

روزنامہ اوصاف  |  Jan 24, 2021

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) خواجہ سرائوں کے تحفظ کے ایکٹ کےرولز 2020نے ان کےحقو ق کو تحفظ فراہم کردیا ہےاور اب انھیں مرد پولیس اہلکار گرفتار نہیں کرسکتےہیں۔تفصیلات کے مطابق  خواجہ سراؤں کے تحفظ، حقوق ایکٹ کے رولز 2020 سندھ ہائی کورٹ میں جمع کرادیئے گئے، اورعدالت نے خواجہ سراؤں کے تحفظ و حقوق کے لیے مؤثر قانون سازی کی منظوری کے بعد طارق منصور ایڈووکیٹ کی درخواست نمٹا دی۔وفاقی کابینہ کی منظوری کے بعد وزارتِ انسانی حقوق نے نوٹیفکیشن جاری کردیا ہے، جس کے تحت اب خواجہ سراؤں کو ہر محکمے میں خصوصی پروٹوکول ملے گا۔
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More