حکومت فرانسیسی سفیرکو نکالنے کے حق میں نہیں، اعجازچوہدری

سماء نیوز  |  Apr 22, 2021

تحریک انصاف کے رہنماء سینیٹر اعجاز چوہدری کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان اپنے پالیسی بیان میں واضح کرچکے ہیں کہ فرانسیسی سفیر کو ملک سے نہیں نکالا جاسکتا۔

سماء کے پروگرام آواز میں گفتگو کرتے ہوئے سینیٹراعجازچوہدری نے کہا کہ ہمارا کالعدم تحریک لبیک پاکستان سے یہی معاہدہ ہوا ہے کہ ہم قرارداد کو پارلیمنٹ میں پیش کریں گے اور وہ جو فیصلہ کرے گی اس پر عملدرآمد کریں گے۔

رہنماء تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ قوم کا اجتماعی شعور پارلیمنٹ سے ظاہر ہوتا ہے چنانچہ ہم نے یہی معاہدہ کیا تھا کہ ہم معاملے کو پارلیمنٹ کے سامنے رکھیں گے اور ہم نے اپنا وعدہ پورا کردیا۔

 قرارداد سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ قومی اسمبلی میں اس پر بحث ہوگی اور اگر پارلیمنٹ نے منظوری دی تو سفیر کو نکال دیں گے لیکن فی الحال ہم چاہتے ہیں کہ یہ معاملہ ایک بار پارلیمنٹ میں طے ہوجائے۔

رہنماء تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ ماضی میں پیپلزپارٹی نے مولانا صوفی محمد، مولانا طاہر القادری اور ن لیگ نے تحریک لبیک پاکستان سے اس قسم کے معاہدے کئے تھے لیکن مسئلہ اپنی جگہ موجود ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت نے جو معاہدہ کیا تھا اس میں 20 اپریل تک کا وقت تھا مگر اس سے پہلے ہمارے پاس ایجنسیوں کی رپورٹ تھی کہ اسلام آباد کے اردگرد لاکھوں لوگ اکٹھا ہورہے ہیں اس لئے ہمیں اقدامات کرنے پڑے۔

اعجازچوہدری نے کہا کہ اگر ہم پیشگی اقدامات نہ کرتے تو صورتحال ہمارے تصور سے بھی زیادہ خراب ہوسکتی تھا۔

رہنماء تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان نے پوری دنیا کو بتایا ہے کہ توہین رسالت صلی اللہ علیہ وسلم کا معاملہ اظہار رائے کے آزادی نہیں اور اس سے دنیا بھر کے مسلمانوں کے جذبات مجروح ہوتے ہیں۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More