ناسا کا شہاب ثاقب سے خلائی جہاز ٹکرانے کا منصوبہ

سماء نیوز  |  Nov 24, 2021

ناسا نے خلا میں مشن روانہ کیا ہے جو مدار میں موجود شہاب ثاقب سے ٹکرائے گا۔

ناسا کی جانب سے ٹویٹ کرتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ کیلی فورنیا کے وین ڈین برگ خلائی مرکز سے شہاب ثاقب ڈیمورفس سے ٹکرانے کے لیے خلائی جہاز روانہ کیا گیا ہے۔ اس مشن کا مقصد شہاب ثاقب کی رفتار اور رخ تبدیل کرنا ہے۔

ناسا کا اسپیس ایکس فیلکن نائین راکٹ ڈٓارٹ نظام سے لیس ہے۔اس ٹیسٹ کا مقصد مستقبل میں کبھی زمین کی جانب بڑھنے والے خطرناک شہاب ثاقب کو روکنا ہے۔

شہاب ثاقب ڈیمورفس کا دائرہ 525 فٹ طویل ہے۔ اس کے گرد ایک اور طویل شہاب ثاقب ڈیڈیموس موجود ہے جس کا دائرہ 2500 فٹ ہے۔ ناسا کے اس تجربہ کے نتائج 2022 میں موصول ہونگے جب شہاب ثاقب ڈیمورفس زمین سے 11 ملین  کلومیٹر کے فاصلے پر ہوگا۔

ناسا کے مطابق زمین کے نزدیک 10 ہزار ایسے شہاب ثاقب موجود ہیں جن  کا سائز 460 فٹ یا اس سے زیادہ ہے لیکن ان میں سے کسی کے زمین سے ٹکرانے کے اگلے 100 برس میں کوئی امکانات نہیں ہیں۔

 

 

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More