امریکہ: 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 90 ہزار کیسز

اردو نیوز  |  Oct 30, 2020

امریکہ میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 90 ہزار سے زیادہ کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔

جان ہاپکنز یونیورسٹی کے اعدادوشمار کے مطابق اکتوبر کے وسط سے امریکہ میں کورونا وائرس کے کیسز  میں اضافہ ہوا ہے۔

صرف ایک دن ہی امریکہ میں 91 ہزار 295 کیسز سامنے آئے جبکہ ایک ہزار 21 افراد ہلاک ہوئے۔

کورونا وائرس کی وبا سے اب تک امریکہ میں 89 لاکھ 44 ہزار سے زیادہ افراد متاثر ہوئے ہیں۔ اس وبا سے سب سے زیادہ اموات بھی امریکہ میں ہوئی ہیں۔

دو لاکھ 28 ہزار سے زیادہ افراد اس وبا سے ہلاک ہوئے۔

امریکہ کے وسطی اور مغربی علاقوں میں کورونا وائرس کی وبا تیزی سے پھیل رہی ہے۔

امریکی انتخابات تین نومبر کو ہوں گے۔ ڈیموکریٹ کے صدارتی امیدوار جوبایئڈن صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف اپنے انتخابی مہم میں کورونا وائرس کی وبا سے صحیح طور پر نہ نمٹنے کا اہم نکتہ استعمال کر رہے ہیں۔

فلوریڈا میں صدر ڈونلڈ کی ریلی میں ہزاروں افراد نے شرکت کی (فوٹو: اے ایف پی)خبررساں ایجنسی روئٹرز کے مطابق کہ دونوں صدارتی امیدواروں نے فلوریڈا میں انتخابی ریلیاں کیں۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی ریلی میں ہزاروں افراد نے شرکت کی جس میں بہت سارے افراد نے ماسک نہیں پہنا تھا۔

امریکی صدر نے کورونا وائرس کی وبا کو کم اہمیت دی اور لوگوں سے مخاطب ہو کر کہا کہ اگر وہ وائرس کا شکار ہو جائیں تو وہ ٹھیک ہو جائیں گے بالکل ویسے ہی جیسے وہ ہوئے تھے۔

صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی ریلی کے کئی گھنٹوں بعد صدارتی امیدوار جو بائیڈن بھی فلوریڈا پہنچے۔ کورونا وائرس کے ممکنہ پھیلاؤ کو روکنے کے لیے ان کی ریلی کے شرکا یا تو گاڑیوں میں رہیں یا اپنی گاڑیوں کے قریب۔

امریکہ میں صدارتی الیکشن تین نومبر کو ہوں گے (فوٹو: اے پی)جو بائیڈن نے ہزاروں افراد کے اجتماع پر امریکی صدر کو تنقید کا نشانہ بنایا۔

شمالی کیرو لائنا کے حکام نے 21 اکتوبر کو صدر ٹرمپ کی ریلی میں شرکت کرنے والے افراد کو خبردار کیا ہے اس میں ریلی میں شریک دو افراد کے کورونا کے ٹیسٹ مثبت آئے ہیں۔

کورونا وائرس سے نمٹنے کے لیے وائٹ ہاؤس کے ٹاسک فورس نے بھی امریکہ کے مغربی حصے اور ملک کے دیگر ریاستوں میں کورونا وائرس کے وسیع پھیلاؤ کو سے متعلق خبردار کیا ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More