الیکشن کمیشن کا لاہور میں ’ووٹ خریدنے‘ کا نوٹس، ملوث افراد کی گرفتاری کا حکم

اردو نیوز  |  Nov 29, 2021

الیکشن کمیشن نے لاہور کے ضمنی انتخابات میں مبینہ طور پر ووٹ خریدنے کی ویڈیو کا نوٹس لے لیا ہے۔ 

لاہور میں این اے 133 کے ضمنی انتخابات میں مبینہ طور پر ووٹ خریدنے کی ویڈیو منظر عام پر آنے الیکشن کمیشن  نے نوٹس لیتے ہوئے متعلقہ اداروں کو مراسلہ ارسال کر دیا ہے۔ 

ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنر کی جانب سے کمشنر لاہور، آئی جی پنجاب، پیمرا اور نادرا کو منظر عام پر آنے والی ویڈیو پر کارروائی کرنے کے احکامات جاری کیے گئے ہیں۔

الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری کیے گئے مراسلہ میں کہا گیا ہے کہ ’سوشل میڈیا اور نیوز چینلز پر چلنی والی فوٹیجز میں مختلف افراد ایک سیاسی جماعت کو ووٹ دینے کے لیے حلف لیتے اور پیسے تقسیم کرتے ہوئے دیکھائے گئے ہیں۔‘ 

’ایک اور ویڈیو میں عوام کو قطار میں لگے دیکھا جاسکتا ہے جہاں ان کے شناختی کارڈ نمبر نوٹ کیے جا رہے ہیں، جس سے یہ تاثر مل رہا ہے کہ ووٹرز کے کوائف نوٹ کر کے انہیں پیسے دے کر ووٹ خرید جارہے ہیں۔‘

الیکشن کمیشن نے فوٹیجز کی فرانزک کرانے، ویڈیو میں دیکھائی جانے والی جگہ کے بارے میں معلومات فراہم کرنے اور اس میں عمل میں ملوث تمام افراد کی شناخت کرکے مکمل بائیو ڈیٹا فراہم کرنے کے ہدایت کی ہے۔  آئی جی پنجاب کو اس واقعہ میں ملوث افراد کو گرفتار کرنے کا بھی حکم دیا گیا ہے۔ 

الیکشن کمیشن کی جانب سے پیمرا کو فوٹیجز کا فرانزک کرانے اور فوٹیجز کی اصلیت معلوم کرنے کا کہا گیا ہے جبکہ مراسلے کے ساتھ فوٹیجز کی سی ڈیز نادرا کو بھی بھیجی گئی ہیں جس میں نادرا سے ویڈیو میں شامل افراد کے شناخت کرنے اور مکمل معلومات فراہم کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔ 

شائستہ پرویز ملک این اے 133 سے مسلم لیگ ن کی امیدوار ہیں۔ (فوٹو: اے پی پی)خیال رہے سوشل میڈیا پر گذشتہ روز سے ایک ویڈیو گردش کر رہی ہے جس کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ یہ حلقہ این اے 133 کے الیکشن کے لیے لگائے گئے ن لیگی کیمپ کی ہے جہاں ووٹ ’خریدے‘ جا رہے ہیں۔

 قبل ازیں مبینہ طور پر ووٹ خریدنے کے معاملے پر مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی نے الیکشن کمیشن سے رجوع کرنے کا اعلان کیا تھا۔

مسلم لیگ ن نے پیپلز پارٹی پر ووٹ خریدنے کا الزام عائد کرتے ہوئے الیکشن کمیشن میں شکایت درج کرائی تھی جس میں مطالبہ کیا گیا تھا کہ ’اسلم گل اور ان کے ساتھیوں کے خلاف سخت ایکشن لیا جائے اور اسلم گل کو نااہل قرار دیا جائے۔‘

اردو نیوز کے نامہ نگار رائے شاہنواز کو پیپلز پارٹی کے امیدوار اسلم گل نے بتایا کہ ان کی پارٹی الیکشن کمیشن میں ن لیگ کے خلاف درخواست جمع کرائے گی۔

وفاقی حکومت کا ردعملدوسری جانب وفاقی وزیر برائے اطلاعات فواد چوہدری نے لاہور میں ووٹ خریدنے کی مبینہ ویڈیو پر ردعمل  دیتے ہوئے کہا ہے کہ کیا 2 ہزار روپے میں ووٹ خریدنا ووٹ کو عزت دینا ہے؟

جہلم میں عوامی جلسے سے خطاب میں فواد چودھری نے الزام لگایا کہ ن لیگ لوگوں کو لالچ دے کر الیکشن لڑتی ہے۔

پیپلز پارٹی کے امیدوار اسلم گل نے بتایا کہ ان کی پارٹی الیکشن کمیشن میں ن لیگ کے خلاف درخواست جمع کرائے گی۔ (فوٹو: ٹوئٹر)وفاقی وزیر کے مطابق الیکٹرانک ووٹنگ مشین متعارف کرانے پر سب سے زیادہ گھبراہٹ ن لیگ اورپیپلزپارٹی کوہوتی ہے۔

فواد چودھری نے کہا کہ ن لیگ کو سیاست چھوڑ کر فلمیں بنانا چاہیے۔

’جب بھی نوازشریف اور مریم نوازکا کیس لگتا ہے لیکس آجاتی ہیں، رسیدیں دیں یا پھرجیل جائے اس کے علاوہ کوئی راستہ نہیں۔‘

وائرل ویڈیو میں کیا ہے؟

ویڈیو میں ن لیگی امیدوار شائستہ پرویز ملک کے بینرز اور فلیکس دیکھے جاسکتے ہیں اور ایک خاتون کو پانچ  دسمبر کو ن لیگ کو ووٹ دینے کا حلف دیتے ہوئے سنا جا سکتا ہے۔

ماسک پہنے دو نوجوان بھی ویڈیو میں نظر آ رہے ہیں جو حلف لینے کے بعد خاتون کو پیسے پکڑاتے ہیں جس کے بعد وہ اٹھ کر چلی جاتی ہیں۔

تحریک انصاف کا مقابلہ اس مافیا سے ہے جو نوٹ سے ووٹ خریدنے کو جمہوری حق اور دھاندلی کو اپنا منشورسمجھتے ہیں۔ جنہوں نے ایک ایک حلقے میں ہزاروں بوگس ووٹ رجسٹرڈ کرکے نظام کو ناسور ذدہ بنایا اور اسی سیاسی مافیا کو الیکشن شفافیت اور EVM میں اپنی سیاست کا خاتمہ نظر آتا ہے۔ pic.twitter.com/o1xRSKkZxM

— PTI (@PTIofficial) November 27, 2021

اس ویڈیو کے منظر عام پر آنے کے بعد بعض سوشل میڈیا صارفین کا کہنا ہے کہ ن لیگ حلقہ این اے 133 کے الیکشن کے لیے ووٹ خرید رہی ہے تاہم کچھ کا خیال ہے کہ یہ ایک ’پلانٹڈ ویڈیو‘ ہے۔

پاکستان مسلم لیگ ن نے این اے 133 میں پاکستان پیپلزپارٹی پر مبینہ طور پر ووٹ خریدنے کا الزام لگایا ہے۔

اتوار کو مریم اورنگزیب کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ’مسلم لیگ ن کی جانب سے الیکشن کمیشن آف پاکستان کو باقاعدہ تحریری شکایت درج کروا دی گئی ہے۔ شکایت لیگی کارکن محمد عارف کی جانب سے جمع کروائی گئی ہے۔‘

بیان میں کہا گیا ہے کہ ’پاکستان الیکشن کمیشن کو جمع کروائی گئی شکایت کے ساتھ ووٹ خریداری کے ویڈیو ثبوت بھی جمع کروائے گئے ہیں۔‘

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More