کراچی بندرگاہ پر سبزیوں کے سینکڑوں کنٹینرز پھنس گئے، بحران کا خدشہ

اردو نیوز  |  Dec 06, 2022

پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی کی بندرگاہوں پر پیاز، ادرک اور لہسن کے سینکڑوں کنٹینر پھنس گئے۔

ملک میں زرمبادلہ کے ذخائر میں کمی کے بعد کمرشل بینکوں نے ایل سی کھولنا کم کی ہے جس پر پاکستان فروٹ اینڈ ویجیٹیبل ایسوسی ایشن نے وزارت تجارت کے سیکریٹری کو خط لکھا ہے۔

خط کے مطابق ہنگامی بنیادوں پر کنٹینرز کلئیر نہ ہوئے تو آنے والے دنوں میں ملک میں سبزی کا بحران شدت اختیار کر جائے گا۔  

فروٹ اینڈ ویجیٹیبل ایسوسی ایشن کے ترجمان وحید احمد نے اردو نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ اس وقت ملک میں زرمبادلہ کے ذخائر میں کمی کو جواز بنا کر کمرشل بینکوں نے درآمدی اشیا کی ایل سی کھولنا کم کر دی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ’ملک میں سیلاب کی وجہ سے کئی سبزیاں کھیتوں میں ہی تباہ ہو گئی ہیں۔ ایسے میں روز مرہ کے استعمال کی اشیا بیرون ملک سے درآمد کی جا رہی ہیں۔ یہ اشیا خورونوش ہیں جو ایک محدود وقت تک ہی قابل استعمال رہ سکتی ہیں۔‘

ان کا کہنا تھا کہ پیاز کے 250، لہسن کے 104 اور ادرک کے 63 کنٹینر کراچی کی بندرگاہ پر موجود ہیں اور درجنوں کنیٹینرز بندرگاہوں پر پہنچنے والے ہیں جو آنے والے دنوں میں ملک کی ضرورت کو پورا کریں گے۔ ’ایسی صورتحال میں آنے والے دنوں میں ملک میں پیاز، ادرک اور لہسن سمیت دیگر اشیا کی قلت کا خدشہ ہے۔‘ 

وحید احمد کے مطابق 55 لاکھ ڈالر کا مال اس وقت بندرگاہ پر پھنسا ہوا ہے، اور جنتے روز یہ مال پورٹ پر موجود رہے گا اس کا ڈیمریج بڑھتا رہے گا اور اشیائے خورونوش کے کنٹینرز کی ہینڈلنگ اور انہیں پورٹ پر رکھنے کے لیے الگ انتظامات کرنے پڑتے ہیں وہ خرچے بھی بڑھ رہے ہیں۔

پاکستان میں زرمبادلہ کے ذخائر میں کمی کے باعث تاجروں کو اشیا درآمد کرنے میں مشکلات کا سامنا ہے۔ فوٹو: اے ایف پی’موجودہ صورتحال کی سنجیدگی دیکھتے ہوئے ہم نے وفاقی وزارت تجارت سے رجوع کیا ہے۔ وزارت کو لکھا ہے کہ اگر فوری طور پر ان درآمدی اشیا کی کلیئرنس نہ کی گئی تو آنے والے دنوں میں ملک میں مہنگائی میں اضافہ ہونے کا خدشہ ہے۔‘

انہوں نے بتایا کہ وزارت کو بتایا ہے کہ اس وقت مارکیٹ میں پیاز کی قیمت 250 سے 270 روپے فی کلو ہے۔ اگر یہ کنٹینرز جلد کلئیر نہ ہوئے تو یہ قیمتیں مزید بڑھنے کا خدشہ ہے۔ جس کا بوجھ براہ راست عوام کو برداشت کرنا پڑے گا۔

یاد رہے کہ اس سے قبل سویا بین اور کنولہ کے بیج کی کلیئرنگ میں بھی رکاوٹ کے مسائل سامنے آئے ہیں جس کی وجہ سے پولٹری کی صنعت بری طرح متاثر ہوئی ہے۔  

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More