عورتوں کے خلاف تشدد ایک سنجیدہ مسئلہ ہے، ہمیں ان کے پاس داد رسی کے لیے خود جانا ہوگا، گورنر سندھ

بول نیوز  |  Nov 25, 2021

گورنر سندھ عمران اسمٰعیل نے کراچی میں میڈیا فیلو شپ کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عورتوں کے خلاف تشدد ایک سنجیدہ مسئلہ ہے، ہمیں ایسی بہنوں اور بیٹیوں کے پاس داد رسی کے لیے خود جانا ہو گا۔

گورنر سندھ عمران اسمٰعیل نے کراچی کے مقامی ہوٹل میں میڈیا فیلو شپ کی افتتاحی تقریب میں بحیثیت مہمان خصوصی شرکت کی، جس کا انعقاد نیشنل کمیشن آن اسٹیٹس آف وومین کی جانب سے کیا گیا تھا۔

گورنر سندھ عمران اسمٰعیل نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ چند روز قبل لیلیٰ پروین کے اوپر کراچی کی ایک کورٹ میں تشدد کیا گیا، میں نے چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ سے اس معاملے پر ٹیلیفون پر بات کی ہے اور نوٹس لینے کی اپیل بھی کی۔

عمران اسمٰعیل نے کہا کہ عدالت کی حدود میں خاتون کے ساتھ ایسے واقعات پیش آنا انتہائی افسوس ناک ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ متعلقہ اداروں کی ذمہ داری ہے کہ عدالتوں میں آنے والے شہریوں کی سیکیورٹی کے اقدامات کو یقینی بنائیں۔

گورنر سندھ نے کہا کہ ایسی خواتین جو جیلوں میں اپنی سزائیں مکمل کر چکی ہیں اور صرف جرمانے کی عدم ادائیگی کی وجہ سے جیل میں قید ہیں ان کی رہائی کے لیے انتظامات کر رہے ہیں۔

انہوں نے آئی جی جیل خانہ جات کو ہدایت کی کہ نیلوفر بختیار سے رابطے میں رہتے ہوئے ایک لسٹ تیار کریں تاکہ جرمانے کی ادائیگی کے بعد ان قیدی خواتین کی رہائی ممکن ہو سکے۔

ان سے قبل چیئر پرسن نیشنل کمیشن آن اسٹیٹس آف وومین نیلوفر بختیار نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ ملک بھر سے 35 صحافیوں کو تربیت دی جائے گی جو خواتین کے حقوق پر کام کا تجزیہ کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ آج کا دن 25 نومبر “خواتین پر تشدد کا عالمی دن” کے طور پر منایا جاتا ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ جیل میں خواتین قیدیوں کی حوصلہ افزائی کے لیے ان کی بنائی ہوئی پینٹنگز بھی نمائش میں رکھی گئی ہیں۔

Square Adsence 300X250
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More