فرانس میں ہزاروں افراد کا احتجاج، 'ویکسین نامنظور' کے نعرے

اردو نیوز  |  Jan 16, 2022

فرانس کے مختلف شہروں میں کورونا کی ویکسین نہ لگانے پر پابندیوں کے خلاف ہزاروں افراد نے مظاہرے کیے ہیں۔

خبر ایجنسی اے ایف پی کے مطابق گزشتہ کئی ماہ سے ہر اختتام ہفتہ ہونے والے ان مظاہروں میں ہزاروں لوگ شریک ہوتے ہیں۔

سنیچر کو کیے گئے احتجاج میں مختلف شہروں میں 54 ہزار افراد نے شرکت کی۔

پولیس کی جانب سے جمع کیے گئے اعداد وشمار کے مطابق گزشتہ ہفتے ان مظاہروں میں ایک لاکھ سے زائد افراد شریک تھے۔

فرانس کی وزارت داخلہ ملک کے مختلف شہروں میں کیے جانے والے ان مظاہروں میں شریک افراد کے اعداد وشمار اکھٹے کرتی ہے۔

فرانس کی پارلیمنٹ میں ویکسین نہ لگانے والے شہریوں پر مختلف قسم کی پابندیوں کی قانون سازی کے لیے اراکین میں ایک ڈرافٹ بل پر بحث جاری ہے۔

دارالحکومت پیرس میں سب سے بڑا احتجاجی مظاہرہ ایفل ٹاور کے قریب کیا گیا جس کی قیادت دائیں بازو کے سیاست دان فلورین فلیپوٹ نے کی۔

ملک کے دیگر بڑے شہروں بورڈیکس، ٹولیوز اور للی میں بھی بڑی تعداد میں مظاہرین سڑکوں پر نکلے۔

مظاہروں میں شریک افراد 'ویکسین نامنظور' اور 'جوکووچ کو رہا کرو' کے نعرے لگا رہے تھے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More