جرمن ادب کا باخ مان پرائز سلووینیہ کی مصنفہ آنا مروان کے نام

ڈی ڈبلیو اردو  |  Jun 26, 2022

آنا مروان کو جرمن زبان کے ادب کا یہ مؤقر انعام دینے کا فیصلہ آسٹریا کے شہر کلاگن فُرٹ میں کیا گیا۔ اسی آسٹرین شہر میں اتوار چھبیس جون کو وہ کئی روزہ چھیالیسواں ادبی اجتماع بھی اپنے اختتام کو پہنچا، جو 'جرمن زبان میں لکھے جانے والے ادب کے دن‘ کہلاتا ہے اور جس کا اختتام آنا مروان کو اِنگے بورگ باخ مان پرائز دیے جانے کی تقریب کے ساتھ ہوا۔

گزشتہ برس یہ جرمن ادبی انعام پیدائشی طور پر ایران سے تعلق رکھنے والی آسٹرین مصنفہ نوا ابراہیمی کو دیا گیا تھا

یہ جرمن ادبی انعام ہر سال دیا جاتا ہے اور اس کے ساتھ اس اعزاز کے حق دار مصنف یا مصنفہ کو 25 ہزار یورو کی نقد رقم بھی دی جاتی ہے۔ سال رواں کا اِنگے بورگ باخ مان پرائز جیتنے والی آنا مروان آسٹریا کے صوبے زیریں آسٹریا میں رہتی ہیں۔

آنا مروان کو یہ ادبی اعزاز دینے کا فیصلہ کرنے والی جیوری نے اپنے فیصلے میں کہا، ''آنا مروان آبائی طور پر تو سلووینیہ سے تعلق رکھتی ہیں، مگر وہ جرمن زبان میں اپنی تخلیقی سوچ اور تصنیفات کو شکل ایسے دیتی ہیں کہ جیسے وہ کسی دوسری زبان والے معاشرے میں کبھی رہی ہی نہ ہوں۔ وہ اپنی تصنیفات میں جرمن زبان کو اپنی ذات سے بھی آگے رکھتے ہوئے چلتی ہیں۔‘‘

عالمی شہرت یافتہ جنوبی افریقی ادیب ولبر اسمتھ انتقال کر گئے

اس سال کلاگن فُرٹ میں جرمن زبان کے ادب کا یہ سالانہ اجتماع کورونا وائرس کی عالمی وبا کے باعث دو سال تک مکمل یا جزوی منسوخی کے بعد پہلی اس طرح منعقد ہوا کہ اس میں جرمن زبان میں لکھنے والے 14 ادیبوں نے ذاتی طور پر کئی روز کے لیے شرکت کی۔

جرمن زبان میں لکھے جانے والے ادب کا انگے بورگ باخ مان پرائز دو سال قبل جرمن مصنفہ ہیلگا شوبرٹ کو دینے کا فیصلہ کیا گیا تھا

یہ انعام آسٹریا کی مشہور ادیبہ اِنگے بورگ باخ مان کے نام پر جاری کیا گیا تھا، جو کلاگن فُرٹ ہی میں پیدا ہوئی تھیں۔ 1926ء میں پیدا ہونے والی باخ مان کا انتقال 1973ء میں ہوا تھا۔

آنا مروان کا ردعمل

آنا مروان نے اِنگے بورگ باخ مان انعام وصول کرنے کے بعد اپنے ابتدائی ردعمل میں کہا کہ ان کے لیے یہ انعام حاصل کرنا بہت بڑا اعزاز ہے اور اس کے لیے وہ جیوری کی شکر گزار بھی ہیں۔ انہوں نے کہا، ''میرا خیال ہے کہ میری تحریریں مجھ سے کہیں زیادہ اچھی باتیں کرتی ہیں۔‘‘

جرمن کتابی صنعت کا امن انعام زمبابوے کی مصنفہ دانگاریبموآ کو دے دیا گیا

آنا مروان نے سلووینیہ کے دارالحکومت لبلیانہ کی یونیورسٹی سے زبان و ادب میں ڈگری حاصل کی تھی اور 1980ء میں پیدا ہونے والی یہ مصنفہ 25 برس کی عمر میں اعلیٰ ادبی تعلیم کے لیے ویانا آئی تھیں، جس کے بعد آسٹریا ہی تقریباﹰ ان کا وطن بن گیا۔ ان کا جرمن زبان میں لکھا گیا پہلا ناول تین سال قبل شائع ہوا تھا۔

م م / ک م (اے ایف پی، ڈی پی اے)

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More