لاک ڈاؤن نرم ہوگا یا سخت، 31جولائی کو اجلاس طلب

سماء نیوز  |  May 29, 2020

وزیراعظم نے 31 جولائی کو قومی رابطہ کمیٹی کا اجلاس طلب کرلیا، جس میں لاک ڈاؤن میں نرمی یا سختی سے متعلق فیصلہ کیا جائے گا۔

ملک میں کرونا وائرس سے آج ایک دن میں ریکارڈ 57 اموات اور 2639 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ معاون خصوصی صحت ڈاکٹر ظفر مرزا نے آئندہ دنوں میں صورتحال مزید خراب ہونے کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔

عید الفطر سے قبل لاک ڈاؤن میں کی گئی نرمی جاری رکھنی ہے یا یکم جون سے اس میں مزید سختی کی جائے گی؟، اس حوالے سے فیصلہ کرنے کیلئے وزیراعظم عمران خان نے 31 جولائی کو قومی رابطہ کمیٹی کا اہم اجلاس طلب کرلیا، جس میں وفاقی وزراء، وزرائے اعلیٰ، عسکری اور این ڈی ایم اے حکام شریک ہوں گے۔

اجلاس میں ٹرین سروس مزید فعال کرنے پر مشاورت کی جائے گی جبکہ پنجاب کی صبح کے وقت پارکس کھولنے، مری اور گلیات کے سیاحتی مقامات پر ہوٹلز کھولنے کی تجاویز پر بھی غور ہوگا۔

قومی رابطہ کمیٹی میں ایس او پیز کے ساتھ ریسٹورنٹس کھولنے پر بھی غور کيا جائے گا۔

پاکستان میں کرونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کی تعداد 63 ہزار 905 ہوگئی جبکہ 1319 افراد زندگی کی بازی ہار چکے ہیں، جن میں ڈاکٹرز، نرسز، پولیس اہلکار اور سیاستدان بھی شامل ہیں۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More