کے الیکٹرک حکام کا 2022 تک شارٹ فال ختم کرنے کا دعویٰ

بول نیوز  |  Sep 16, 2020

کے الیکٹرک حکام  نے 2022 تک  بجلی کا شارٹ فال ختم کرنے کا دعویٰ کردیا۔

تفصیلات کے مطابق   کے الیکڑک کی کثیرسالہ ٹیرف کے وسط مدتی جائزے کے تحت ٹیرف میں اضافے کی درخواست پر نیپرا نے سماعت کی۔

سماعت کے دوران نیپرا حکام نے کہا کہ کے الیکڑک نے سسٹم میں مقررہ حد سے کم سرمایہ کاری کی ہے ۔ڈسٹری بیوشن نیٹ ورک میں بھی کے الیکڑک نے کم سرمایہ کاری کی ہے ۔

نیپرا حکام کا کہنا تھا کہ  کے الیکڑک کی کارکردگی  میں کوئی بہتری  نہیں آئی ہے۔

کے الیکڑک چیف فنانشل آفیسر محمد عامر نے کہا کہ  نئے منصوبوں میں بعض وجوہات کے باعث کم سرمایہ کاری کی ہے،  بجلی کی تقسیم کے حوالے سے بیس ارب روپے کی اضافی سرمایہ کاری کی ہے ۔

چیف فنانشل آفیسر نے کہا کہ  بجلی کی پیداوارمیں نیپرا اہداف سے دس ارب زائد  کی سرمایہ کاری کی ہے  تاہم مختلف منصوبوں میں 62 ارب روپے کے شارٹ فال کاسامنا ہے ۔

محمد عامر نے کہا کہ  بجلی کی تقسیم کے حوالے سے 46 ارب کی اضافی سرمایہ کاری کا پلان ہے ۔

کے الیکٹرک کے چیف فنانشل آفیسر نے دعویٰ کیا کہ   2022 تک بجلی کا شارٹ فال ختم  ہوجائے گا۔

محمد عامر نے کہا  کہ  2022 تک کراچی میں بجلی کی قلت ختم ہو جائے گی۔2022 میں کے الیکٹرک کی طلب 4050 میگاواٹ ہو گی جبکہ بجلی کی پیداوار 4140 میگاواٹ ہو گی۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More