کراچی میں ’پریشر والا گوشت‘ ضبط

سماء نیوز  |  Jan 21, 2021

بلدیہ عظمیٰ کراچی کے ویٹرنری ڈپارٹمنٹ نے شہر کے مختلف علاقوں میں کارروائیاں کرتے ہوئے 600 کلو ’پریشر والا گوشت‘ ضبط کرلیا جبکہ غیرقانونی مذبح خانون کو بھی تنبہہ کردی ہے۔

ویٹرنری ڈپارٹمنٹ کے حکام نے جمعرات کو لیاقت آباد، گلستان جوہر، پہلوان گوٹھ، واٹر پمپ، موسیٰ کالونی اور ناظم آباد میں غیرقانونی ذبیحہ اور پریشر والے گوشت کی فروخت کے خلاف چھاپے مارتے ہوئے 490 کلو گرام گائے کا گوشت اور 110 کلو گرام بکرے کا گوشت ضبط کرلیا۔

پریشر والا گوشت کیا ہے

قصائی حضرات جانور کو ذبح کرنے کے بعد خون کی نالیوں، رگوں اور گوشت میں پریشر سے پانی داخل کرتے ہیں۔ اس کے دو مقاصد ہوتے ہیں۔ اس طرح پریشر سے پانی داخل کرکے مردہ جانور کی رگوں سے خون نکالا جاتا ہے تاکہ گوشت کی کٹائی جلد از جلد ہوسکے۔ یہ ایک غیر فطری عمل اور حفظان صحت کے اصولوں کے خلاف ہے۔

اس کا دوسرا مقصد گوشت کا وزن مصنوعی طریقے سے بڑھانا ہوتا ہے۔ جب رگوں سے پانی داخل کیا جاتا ہے تو وہ جسم کے مختلف حصوں میں پہنچ جاتا ہے اور گوشت ایک طرح سے پھول جاتا ہے جس کے نتیجے میں گوشت کا وزن بڑھ جاتا ہے۔

ضبط شدہ گوشت چڑیاگھر منتقل

ضبط شدہ گوشت کو بعد ازاں جانوروں کی خوراک کے لئے بلدیہ عظمیٰ کراچی کے چڑیا گھر اور عالمگیر ویلفیئر ٹرسٹ کو بھجوا دیا گیا۔ کارروائی میں ویٹرنری ڈاکٹر محمد انعام اور ان کی ٹیم کے ارکان ڈاکٹر شفیق، ڈاکٹر تاج اور دیگر نے حصہ لیا۔

ایڈمنسٹریٹر کراچی کی ہدایات پر ویٹرنری ڈپارٹمنٹ کے سینئر ڈائریکٹر نے محکمہ ویٹرنری کے تحت چھاپہ مار ٹیمیں تشکیل دی ہیں جو شہر کے مختلف علاقوں میں غیرقانونی ذبیحہ اور پریشر والے گوشت کی فروخت کو روکنے کے لئے مسلسل کارروائی کر رہی ہے۔

ایڈمنسٹریٹر کراچی لئیق احمد نے کہا ہے کہ شہریوں کو حفظان صحت کے اصولوں کے مطابق غذائی اشیاء بشمول گوشت کی فراہمی بلدیاتی اداروں کی اہم ذمہ داریوں میں شامل ہے لہٰذا اس کام میں کوتاہی نہیں کی جاسکتی۔ ویٹرنری ڈپارٹمنٹ شہر کے تمام حصوں میں فروخت ہونے والے گوشت کا معائنہ کرے اور جہاں بھی غیرقانونی ذبیحہ یا پریشر والا گوشت فروخت ہوتا نظر آئے فوری کارروائی کرکے اسے روکا جائے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More