مقام ابراہیم کی اندرونی تصاویر جاری

بول نیوز  |  May 06, 2021

مقام ابراہیم کے پتھر پر موجود قدموں کے نشانات کی لمبائی اور چوڑائی 50 سینٹی میٹر ہے۔

مسجد حرام میں واقعہ مقام ابراہیم کی جدید تصویر سعوی عرب کے رئاسة شؤون الحرمين نے سوشل میڈیا اکاؤنٹس  پرشیئر کردی۔

Saudi Arabia releases never-before-seen images of Maqam-e-Ibrahim. 🕋 pic.twitter.com/nYCMYfhd5v

— Danyal Gilani (@DanyalGilani) May 5, 2021

کیا آپ نے کبھی خانہ کعبہ کے مشرقی حصے پر موجود مقام ابراہیم کو اندر سے دیکھنے کی خواہش کی ہے؟ اگر ایسا ہے تو سعودی عرب میں موجود مسلمانوں کی دو مقدس مساجد مسجد نبویﷺ اور مسجد الحرام کے اُمور کی نگرانی کرنے والے ادارے رئاسة شؤون الحرمين کے ٹوئٹر اور انسٹاگرام اکاؤنٹس سے مقام ابراہیم کے اندر کی ایسی تصاویر شیئر کی گئی ہیں جنھیں جدید تکنیک سے عکس بند کیا گیا ہے۔

Technical Information

Shooting Time: 7 hours.Number of Photos: 1050 Fox Stack Panorama.Image Resolution: 49,000 Mega Pixels.Processing Time: More Than 50 Working Hours. https://t.co/E9xktWDGJr pic.twitter.com/MOUWWJZbHA

— 𝗛𝗮𝗿𝗮𝗺𝗮𝗶𝗻 (@HaramainInfo) May 3, 2021

مقام ابراہیم وہ جگہ ہے جہاں پر حضرت ابراہیمؑ نے بیت اللہ کی تعمیر کی تھی اور اس مقام پر اللہ کے پیغمبر حضرت ابراہیمؑ کے قدم مبارک کے نشان موجود ہیں۔

Technical Information

Shooting Time: 7 hours.Number of Photos: 1050 Fox Stack Panorama.Image Resolution: 49,000 Mega Pixels.Processing Time: More Than 50 Working Hours. https://t.co/E9xktWDGJr pic.twitter.com/MOUWWJZbHA

— 𝗛𝗮𝗿𝗮𝗺𝗮𝗶𝗻 (@HaramainInfo) May 3, 2021

مسجد حرام اور مسجد نبویﷺ کے امور کی دیکھنے والے ادارے  کی جانب سے جاری کی گئیں تصاویر میں حضرت ابراہیمؑ کے قدموں کے نشانات کو واضح طور پر جدید فوٹو امیجنگ ٹیکنالوجی کے ذریعے باریکی سے عکس بند کیا گیا ہے۔

رئاسة شؤون کےکی جانب سے ٹوئٹر اکاؤنٹ پرجاری بیان میں مقام ابرہیم کی تفصیلات بیان کی گئیں ہیں،سعودی ادارے کا کہنا ہے کہ پتھر پر موجود قدموں کے نشانات کی لمبائی اور چوڑائی 50 سینٹی میٹر ہے۔

Detailed Pictures of Maqam e Ibrahim (Station of Abraham) taken recently. pic.twitter.com/4w7U8MgSuK

— Haramain Sharifain (@hsharifain) May 5, 2021

مقام ابراہیم کو خانہ کعبہ کے مشرقی حصے پر موجود ہے۔

رئاسة شؤون الحرمين کے مطابق تصاویر کی سات گھنٹے تک عکس بندی کی گئی اور’فوکس سٹیک پینوراما‘ نامی فوٹوگرافی تکنیک کا استمال کیا گیاجبکہ تصاویر کو اکٹھا کرنے میں تقریباً 50 گھنٹوں کا وقت لگا۔

Detailed Pictures of Maqam e Ibrahim (Station of Abraham) taken recently. pic.twitter.com/4w7U8MgSuK

— Haramain Sharifain (@hsharifain) May 5, 2021

اس سے قبل سعودی حکومت نے جنت سے نازل شدہ پتھر حجرہ اسودکی تصاویر بھی جاری کی تھیں۔

#رئاسة_شؤون_الحرمين توثق الحجر الأسود بتقنية (Focus Stack Panorama)

ماهي هذه التقنية ؟ هي تقنية يتم فيها تجميع الصور بوضوح مختلف، حتى تنتج لنا صورة واحدة بأكبر دقة. pic.twitter.com/n0mWCPAw1r

— رئاسة شؤون الحرمين (@ReasahAlharmain) May 3, 2021

سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے اس اقدام کو سراہا جارہا کیونکہ مسلمانوں کے نزدیک حجرہ اسود اور مقام ابراہیم سمیت دیگر مقدس مقامات انہتائی اہمیت کے حال ہیں۔

--> Double Click 970 x 90
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More