پاکستان میں شرح نمو 4فیصد تک پہنچنے کا امکان

سماء نیوز  |  Sep 22, 2021

فوٹو: اے ایف پی

ایشیائی ترقیاتی بینک (اے ڈی بی) کی جاری کردہ رپورٹ کے مطابق مالی سال 2021 میں پاکستان کی معاشی شرح نمو 3.9 فیصد تک پہنچ گئی اور توقع کی جا رہی کہ مالی سال 2022 میں شرح نمو 4 فیصد تک پہنچ جائے گی، کیونکہ کرونا وبا کے دوسرے سال کاروباری سرگرمیاں آہستہ آہستہ دوبارہ بحال ہونا شروع ہوچکی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق اس سال مہنگائی میں بھی کمی آئے گی۔ مہنگائی کی شرح گزشتہ سال 10.7 فیصد تھی جو رواں سال کم ہو کر 8.9 فیصد ہوچکی ہے۔ اسکے علاوہ پاکستان میں کئی شعبوں میں کاروباری سرگرمیاں بحال ہوئیں، صنعتی شعبہ اور خوراک کی سپلائی چین میں بہتری سے مہنگائی میں کمی آئے گی۔

زرعی شعبے کی پیداوار میں کمی ہوئی ہے لیکن زری ٹرانسفارمیشن پلان سے فوڈ سیکیورٹی میں بہتری متوقع ہے۔

کرونا وبا پر قابو پانے کے لیے بہتر حکمت عملی اور مالیاتی پالیسی بنائی گئیں جس سے 2021 میں پاکستان کی معاشی شرح نمو میں بہتری آئی جس نے تمام شعبوں میں بحالی کے عمل کو تیز کیا۔ صنعت میں ترقی، بنیادی طور پر تعمیرات اور چھوٹے پیمانے پر مینو فیکچرنگ اور خدمات کی پیش گوئی کی گئی ہے کہ مالی سال 2022 میں بہتری آئے گی۔ توقع ہے کہ زراعت کا شعبہ جی ڈی پی کی شرح کو بڑھانے میں مدد فراہم کرے گا۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ برآمدی مسابقت کو بڑھانے کے لیے مالیاتی مراعات اور پالیسیاں، مینوفیکچرنگ سیکٹر کی کارکردگی کو تقویت دینے اور نجی سرمایہ کاری کو بڑھانے کے لیے معاشی نقطہ نظر کو مضبوط بنانے میں اہم کردار ادا کرتے رہیں گے۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ اگست 2020 کے مقابلے تیل کی عالمی قیمتوں میں 27.21 ڈالر فی بیرل اضافہ ہوا اور اگست2021 میں خام تیل 70 ڈالر فی بیرل سے تجاوز کرگیا، جبکہ مالی سال 2022 میں عالمی مارکیٹ میں تیل کی اوسط قیمت 67 ڈالر فی بیرل رہنے کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More