منی بجٹ کے اثرات، متعدد دواؤں کی قیمتوں میں نمایاں اضافہ

بول نیوز  |  Jan 14, 2022

حکومت کی جانب سے  پیش کیے گئے منی بجٹ کے بعد متعدد دواؤں کی قیمتوں میں نمایاں اضافہ ہوگیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق  دواؤں کی تیاری میں استعمال ہونے والے خام مال پر 17.5 فیصد ٹیکس کے بعد متعدد دوائیں 10 تا 20 فیصد مہنگی ہوگئیں۔

بلڈ پریشر، کالیسٹرول، معدے کی تیزابیت والی دواؤں سمیت جسم کے درر کو فوری دور کرنے والے انجیکشنز بھی مہنگے ہوگئے۔

31 روپے میں فروخت ہونے والا درد کش انجیکشن وورن 36 روپے کا ہوگیا۔ معدے یا السر کی دوا وینزا کی قیمت میں بھی 5 روپے کا اضافہ ہوگیا۔

کالیسٹرول کے لیے استعمال ہونے والی دوا روسوویکس کی قیمت میں بھی 10 روپے اضافہ ہوگیا۔ اینٹی بائیوٹک میکروبک کی قیمت میں بھی  8 روپے کا اضافہ ہوا ہے۔

بلڈ پریشر کی دوا لوسنٹا کی قیمت میں 10 روپے جبکہ شوگر کے مریضوں کی دوا میگزا من کی قیمت میں 5 روپے اضافہ  ہوا ہے۔

درد اور بخار میں آرام کے لیے عام استعمال ہونے والی گولی  پیناڈول کا 15 روپے والا پتہ اب 25 روپے کا ہوگیا ہے۔

Square Adsence 300X250
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More