ڈارک ویب اسٹنگ، اہم شخصیات سمیت 150افراد گرفتار، یوروپول

سماء نیوز  |  Oct 26, 2021

یوروپو پول نے ڈارک ویب کیخلاف سب سے بڑے اسٹنگ میں غیر قانونی سامان کی خرید و فروخت میں ملوث ہائی پروفائل اہداف سمیت 150 افراد کو گرفتار کرلیا۔

انٹرپول کی طرز پر کام کرنیوالے یورپی پولیس کے ادارے (یوروپول) نے منگل کو اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ دنیا بھر کی پولیس نے 150 مشتبہ افراد کو گرفتار کیا ہے جن میں امریکا اور برطانیہ سمیت کئی ہائی پروفائل اہداف بھی شامل ہیں۔

رپورٹ کے مطابق ڈارک ویب کو نشانہ بنانے والے اب تک کے سب سے بڑے اسٹنگ میں غیر قانونی سامان کی آن لائن خرید و فروخت میں ملوث افراد کو گرفتار کیا گیا، آپریشن ڈارک ہنٹر کے دوران لاکھوں یوروز نقد رقم اور بٹ کوائن کے علاوہ منشیات اور بندوقیں بھی برآمد کی گئی ہیں۔

غیرملکی میڈیا کے مطابق جرمن پولیس کی زیر قیادت رواں برس کے آغاز میں شروع کئے جانیوالے اسٹنگ سے ’دنیا کی سب سے بڑی‘ ڈارک نیٹ مارکیٹ کو ختم کیا گیا۔

دی ہیگ میں قائم یوروپول نے بتایا ہے کہ ڈارک ہنٹر دراصل آسٹریلیا، بلغاریہ، فرانس، جرمنی، اٹلی، نیدرلینڈز، سوئٹزرلینڈ، برطانیہ اور امریکا میں الگ الگ کارروائیوں پر مشتمل تھا۔

صرف امریکا میں پولیس نے 65 افراد کو گرفتار کیا جبکہ 47 کو جرمنی میں، 24 کو برطانیہ میں، اٹلی اور نیدرلینڈز میں 4، 4 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔

یوروپول کا کہنا ہے کہ جرمن-ڈینش سرحد کے قریب سے گرفتار ہونیوالے مبینہ آپریٹر کی گرفتاری کے وقت مجرمانہ انفرااسٹرکچر بھی قبضے میں لیا گیا، جس سے دنیا بھر کے تفتیش کاروں کو شواہد کا ایک ذخیرہ ملا ہے۔

جرمن پراسیکیوٹرز نے اس وقت کہا تھا کہ ڈارک مارکیٹ اس وقت منظر عام پر آئی تھی جب ویب ہوسٹنگ سروس سائبر بنکر کیخلاف ایک بڑی تحقیقات ہورہی تھیں، یہ سائبر بنکر جنوب مغربی جرمنی میں نیٹو کے ایک سابق بنکر میں واقع ہے۔

پولیسنگ کے ادارے کا کہنا ہے کہ یوروپول کا یورپی سائبر کرائم سینٹر ای سی 3 اس وقت اہم اہداف کی شناخت کیلئے انٹیلیجنس پیکجز مرتب کررہا ہے۔

خفیہ ’ڈارک نیٹ‘ میں ایسی ویب سائٹیں شامل ہیں جن تک رسائی صرف مخصوص سافٹ ویئر یا اجازت کے ساتھ حاصل کی جاسکتی ہے جو صارفین کیلئے ان کا نام پوشیدہ رکھنے کو یقینی بناتا ہے۔

یوروپول کے ڈپٹی ڈائریکٹر آپریشنز کا کہنا ہے کہ اس طرح کی کارروائیوں کا مقصد ڈارک ویب پر کام کرنیوالوں کو متنبہ کرنا ہے کہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کے پاس ان کا پردہ فاش کرنے اور غیر قانونی سرگرمیوں کیلئے انہیں جوابدہ ٹھہرانے کے ذرائع اور عالمی تعاون موجود ہے۔

قانون نافذ کرنے والے اداروں نے کارروائیوں میں 26 ملین یوروز سے زیادہ نقد رقم اور ورچول کرنسیز قبضے میں لی ہیں، اس کے علاوہ 45 بندوقیں اور 234 کلو گرام منشیات بھی پکڑی گئی ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More