کوہلی کی بری فارم، ’اب ٹیم میں شمولیت پر سوال اٹھ رہے ہیں‘

اردو نیوز  |  Jul 02, 2022

انڈین بیٹر وراٹ کوہلی انگلینڈ کے خلاف جاری آخری ٹیسٹ میچ کی پہلی اننگز میں بھی مایوس کن کارکردگی دکھا کر جلد آوٹ ہو گئے ہیں۔

جمعے کو برمنگھم میں جاری ٹیسٹ میچ کے پہلے دن جہاں انڈین بیٹنگ لائن مشکل میں پڑ گئی وہی سٹار بیٹر وراٹ کوہلی کی بری فارم بھی ٹھیک نہیں ہو سکی ہے۔

وراٹ کوہلی صرف 11 رنز بنا کر اولے پوپس کی گیند پر بولڈ ہو گئے ہیں۔

انڈین ٹیم کے کپتان روہت شرما کی عدم شمولیت کے باعث انڈین ٹیم وراٹ کوہلی کی بیٹنگ پر کافی انحصار کر رہی تھی تاہم وہ ایک بار پھر ناکام رہے۔

What a summer Matt Potts is having! Kohli bowled!

(via @englandcricket) #ENGvINDpic.twitter.com/Y90dGd3VOr

— ESPNcricinfo (@ESPNcricinfo) July 1, 2022

وراٹ کوہلی کے جلدی آوٹ ہونے پر سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر بھی تبصرے دیکھنے میں آ رہے ہیں۔

اکشت نامی ایک صارف نے ٹویٹ کیا ’زندگی اب صرف یہی رہ گئی ہے کہ وراٹ کوہلی کو کھیلتے دیکھتا ہوں اور اس کے آؤٹ ہونے کے بعد ٹی وی بند کر دیتا ہوں۔‘

تھرن نامی ایک صارف نے میم کے ذریعے کوہلی کے مداحوں کی پریشانی کو ظاہر کیا۔

کے آر نٹراجن نامی ایک صارف اپنے ٹویٹ میں کہا ’وراٹ کوہلی کی ایک اور ناکامی، اب کوہلی کی ٹیم میں شمولیت پر سوال اٹھ رہا ہے، آپ پُجارا اور رہانے کے لیے ایک اور وراٹ کوہلی کے لیے دوسرا معیار نہیں رکھ سکتے حالانکہ کوہلی عظیم کھلاڑی رہ چکے ہیں، وقت تیزی سے ختم ہو رہا ہے۔‘

ایک صارف نے وراٹ کوہلی کو کھیل سے وقفہ لینے کا مشورہ دیا۔

وراٹ کوہلی 2020 سے بری فارم کا شکار ہیں، جنوری 2020 سے کوہلی کی اوسط 27 رنز ہے۔

خیال رہے کہ وراٹ کوہلی نے آخری مرتبہ سینچری 23 نومبر 2019 کو بنگلہ دیش کے خلاف بنائی تھی جس کے بعد سے اب تک انہوں نے 74 اننگز میں کوئی سینچری سکور نہیں کی ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More