غیرملکی ایئرلائنز کے 225 ملین ڈالر روکنے پر بین الاقوامی ایجنسی کی پاکستان کو وارننگ

اردو نیوز  |  Dec 09, 2022

انٹرنیشنل ایئر ٹرانسپورٹ ایسوسی ایشن (ایاٹا) نے انکشاف کیا ہے کہ ’پاکستان نے غیرملکی ایئر لائنز کے 22 کروڑ 50 لاکھ ڈالر روک رکھے ہیں‘، جس کی وجہ سے اس نے وارننگ لیٹرز جاری کر دیے ہیں۔

ایاٹا نے غیرملکی ائیر لائنز کی جانب سے ٹکٹوں کی فروخت اور دیگر سرگرمیوں سے حاصل ہونے والی آمدنی متعلقہ ملکوں کو واپس بھیجنے میں رکاوٹوں کے سبب متعلقہ حکومتوں کو بین الاقوامی قوانین اور معاہدوں پر عمل درآمد کرنے کے لیے لیٹرز جاری کیے ہیں۔  

ایاٹا کی جانب سے جاری کیے گئے اعلامیے کے مطابق ’حکومتوں کی جانب سے ائیر لائنز کے واپس ہونے والے فنڈز میں گزشتہ چھ مہینوں میں 25 فیصد تک اضافہ دیکھا گیا ہے تاہم مجموعی طور پر مختلف حکومتوں نے ائیر لائنز کے دو ارب ڈالرز تک روک رکھے ہیں۔‘

پاکستان سول ایوی ایشن کے ترجمان نے معاملے کی تصدیق کرتے ہوئے اردو نیوز کو بتایا ہے کہ ’سول ایوی ایشن صرف عمل درآمد یقینی بنانے والے ایک ادارہ ہے جبکہ متعلقہ معاملہ سٹیٹ بینک اور وزارت خزانہ کا ہے۔‘

ذرائع کے مطابق ’فنڈز روکنے کے معاملے کا تعلق ملک کی موجودہ غیرملکی زرمبادلہ کے ذخائر کی صورتحال سے ہے۔‘ (فوٹو: روئٹرز)سول ایوی ایشن کے ترجمان نے مزید تبصرہ کرنے سے گریز کیا تاہم اردو نیوز کو ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ ’یہ معاملہ غیرملکی زرمبادلہ کے ذخائر کی موجوہ صورتحال کے باعث تعطل کا شکار ہوا ہے۔‘

ایاٹا نے بھی اس حوالے سے واضح کیا ہے کہ ’ایئر لائنز کو رقوم کی واپسی روکنا کم ہوتے ہوئے زرمبادلہ کے ذخائر کو بڑھانے کا آسان طریقہ نظر آتا ہے لیکن بالآخر مقامی معیشت کو اس کی بڑی قیمت ادا کرنا پڑے گی۔‘

انٹرنیشنل ایئر ٹرانسپورٹ ایسوسی ایشن نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ بین الاقوامی معاہدوں پر عمل درآمد کیا جائے اور ٹکٹوں کی فروخت اور دیگر سرگرمیوں سے حاصل کی جانے والی آمدنی غیرملکی ائیرلائنز کو واپس بھیجنے میں حائل رکاوٹوں کو دور کیا جائے۔

سول ایوی ایشن کے ذرائع کے مطابق’سول ایوی ایشن نے متعلقہ معاملہ متعدد بار وزارت خزانہ کے سامنے رکھا ہے تاہم اس پر پالیسی فیصلہ سٹیٹ بینک آف پاکستان اور وزارت خزانہ کا ہے۔‘

پاکستان کے علاوہ 27 دیگر ممالک نے بھی غیرملکی ایئرلائنز کی رقوم کو روکی ہوئی ہیں۔ (فائل فوٹو: ٹوئٹر)ذرائع کے مطابق ’فنڈز روکنے کے معاملے کا تعلق ملک کی موجودہ غیرملکی زرمبادلہ کے ذخائر کی صورتحال سے ہے۔ غیرملکی ائیر لائنز پاکستان میں ٹکٹنگ اور دیگر سروس سے حاصل کرنے والی آمدنی کو ڈالر میں تبدیل کر کے اپنے ملک واپس بھیجتی ہیں۔‘

پاکستان کے علاوہ 27 دیگر ممالک نے بھی غیرملکی ایئرلائنز کی رقوم کو روکی ہوئی ہیں جن میں پاکستان کا دوسرا نمبر ہے۔

ایاٹا کے مطابق پہلے نمبر پر نائجیریا، پاکستان دوسرے جبکہ بنگلہ دیش غیرملکی ائیر لائنز کے آمدنی روکنے کی فہرست میں تیسرے نمبر پر ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More