ایران،طیارہ حادثےکی ویڈیوبنانےوالےشخص کےساتھ کیاہوا؟

بول نیوز  |  Jan 15, 2020

ایران کے ایلیٹ انقلابی گارڈزنیوکرین طیارہ حادثےکی ویڈیو بنانے والے  شخص کو گرفتار کیا ہے۔

   ایران  کی میڈیارپورٹ  کے مطابق ایران کے ایلیٹ انقلابی گارڈزنے ایک ایسے شخص کوحراست  میں لیاہے جس نے  یوکرائنی  طیارےکی ویڈیوپوسٹ کوسوشل میڈیامیں  پوسٹ کیاتھا۔

تاہم  لندن میں مقیم ایک ایرانی صحافی (جس )نےابتدائی طور پریہ فوٹیج پوسٹ کی تھی کاکہناہےکہ  اس کا منبع محفوظ ہے اورایرانی حکام نےغلط شخص کوگرفتارکیا ہے۔

I'm getting lots of calls.

They have arrested the WRONG person regarding the #Flight752 In Iran. The person who is a source of the video is SAFE and I can assure you IRGC is orchestrating another lie. They killed 176 passengers on commercial plane. Thats the real story here. https://t.co/X2k0ycwMBD

— 🤖Nariman (@NarimanGharib) January 14, 2020

اس سے قبل ایران کی عدالت کےترجمان  جانب سےاعلان کیاگیاتھا کہ یوکرین کے مسافر طیارے کو مار گرائے جانے کے واقعے کے ذمے داران کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

عدلیہ کےترجمان غلام حسین اسماعیلی نے منگل کو گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھاکہ طیارہ تباہ ہونے کے واقعے کی وسیع تر تحقیقات کی گئیں اور چند افراد کو گرفتار کیا گیا ہے تاہم انہوں نے اس بات کی وضاحت نہیں کی کہ اس سلسلےمیں کتنے افرادکی گرفتاری عمل میں لائی گئی ہے۔

اس سے قبل منگل کو ایران کے صدر حسن روحانی نے یوکرین کا طیارہ مارگرانےکے حادثے کی تحقیقات کے لیے خصوصی عدالت کے قیام کا مطالبہ کیاتھا ۔

واضح رہے کہ 8  جنوری کو تہران کے امام خمینی ایئرپورٹ سے اڑان بھرنے والا یوکرین کا مسافر طیارہ گر کر تباہ ہوگیا تھا جس کے نتیجے میں طیارے میں سوار تمام 176 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

یہ طیارہ تہران سے یوکرین کے دارالحکومت کیو کے لیے روانہ ہواتھااوراس میں 167 مسافر اور عملے کے 9 افراد سوار تھے، طیارے میں 82 ایرانی باشندوں سمیت 57 کینیڈین اور یوکرین کے بھی 11 شہری موجود تھے جن میں متعدد بچے بھی شامل تھے۔

عالمی رہنماؤں نے ایران پر مسافر طیارہ مار گرانے کا الزام عائد کیا تھا تاہم ایران کی جانب سے ابتدائی طور پر ان الزامات کی تردید کرتے ہوئے یوکرین اور بوئنگ کمپنی کو تحقیقات میں شرکت کی دعوت دی گئی تھی۔

تاہم ،ناقابل تردید ثبوت منظرعام پرآنے کے بعد ایران نے یوکرین کا طیارہ مارگرانے کا اعتراف کرتےہوئےکہاتھا کہ غیرارادی طور پر ’انسانی غلطی‘ کی وجہ سے طیارے کو نشانہ بنایا گیا۔

حسن روحانی نے اس واقعے کو دردناک اورناقابل معافی غلطی قرار دیتے ہوئے وعدہ کیا کہ ان کی حکومت اس مقدمے کو ہر حال میں منطقی انجام تک پہنچائے گی۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More