سویڈن کی پہلی خاتون وزیراعظم منتخب ہوتے ہی مستعفی

سماء نیوز  |  Nov 25, 2021

سویڈن کی پہلی  خاتون نومنتخب  وزیر اعظم میگڈالینا اینڈرسن نے منتخب ہونے کے چند گھنٹوں بعد ہی استعفیٰ دے دیا۔

عالمی میڈیا کے مطابق وزیر اعظم میگڈالینا اینڈرسن کو بدھ کے روز ہی وزیر اعظم بنایا گیا تھا  اور وہ اسی روز چند گھنٹوں بعد ہی مستعفی ہوگئیں۔

میگڈالینا اینڈرسن نے بجٹ کی منظوری میں ناکامی اور اتحادی جماعت کے علیحدہ ہونے کی وجہ سے استعفیٰ دیا۔

سویڈش پارلیمان نے حکومت کے بجائے حزب مخالف کے تیار کردہ بجٹ کے حق میں ووٹ دیا جن میں تارکین وطن مخالف انتہائی دائیں بازو کی جماعتیں شامل ہیں۔ میگڈالینا اینڈرسن کا کہنا تھا کہ وہ اتجادی جماعتوں کے بغیر دوبارہ وزیر اعظم بننے کی کوشش کریں گی۔

سوشل ڈیموکریٹ  پارٹی کی رہنما کا  کہنا ہے کہ یہ ایک آئینی عمل ہے کہ جب کوئی ایک پارٹی استعفیٰ دے دے تو مخلوط حکومت کو مستعفی ہونا پڑتا ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ وہ ایک ایسی حکومت کی قیادت نہیں کرنا چاہتیں جس کی قانونی حیثیت پر سوال اٹھائے جائیں۔

دوسری طرف اسمبلی اسپیکر کا کہنا ہے کہ وہ پارٹی رہنماؤں سے مشاورت کے بعد اگلے لائحہ عمل کا فیصلہ کریں گے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More