کورونا کا علاج کرنے والی دوا کے متعلق نیا ڈیٹا جاری

بول نیوز  |  Nov 27, 2021

امریکا کی کمپنی مرک اینڈ کو نے اپنی تجرباتی کووڈ 19 دواکے اپ ڈیٹڈ ڈیٹا کے متعلق کہا ہے کہ دوا سابقہ رپورٹس کے مقابلے میں وبائی بیماری سے اسپتال میں داخلے اور موت کا خطرہ کم کرنے میں نمایاں حد تک کم مؤثر ہے۔

خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق دوا ساز کمپنی نے بتایا کہ اس کی کووڈ 19 دوا اسپتال میں داخلے اور موت کا خطرہ 30 فیصد تک کم کردیتی ہے۔

یہ نتیجہ 1433 مریضوں کے ڈیٹا کی جانچ پڑتال سے نکالا گیا۔

اس سے قبل اکتوبر 2021 میں کمپنی کی جانب سے جاری ڈیٹا میں اس تجرباتی دوا کی بیماری کے خلاف افادیت 50 فیصد بتائی گئی تھی۔

اکتوبر میں جاری کیا گیا ڈیٹا 775 مریضوں میں اس دوا کے ٹرائل کے نتائج پر مبنی تھا۔

مولنیوپیراویر (molnupiravir) نامی دوا کو مرک نے ریج بیک بائیو تھراپیوٹیکس کے ساتھ مل کر تیار کیا ہے۔

مرک کی جانب سے دوا کی افادیت میں کمی اس کی فروخت پر اثرانداز ہوسکتی ہے، کیونکہ فائزر کی جانب سے بھی تجرباتی کووڈ دوا کی افادیت کے عبوری ڈیٹا میں اسے اسپتال میں داخلے اور موت کی روک تھام کے لیے 89 فیصد تک مؤثر قرار دیا گیا ہے۔

فائزر اور مرک کی تیار کردہ ادویات کو وبا ءکے خلاف جنگ کے لیے اہم ہتھیار قرار دیا جارہا ہے کیونکہ ان کا استعمال گھر میں کرکے اسپتال میں داخلے اور اموات کی روک تھام کی جاسکتی ہے۔

Square Adsence 300X250
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More