پاکستانی روپے کے مقابلے میں ڈالر کی قدر میں دو ہفتے بعد نمایاں کمی

اردو نیوز  |  Sep 26, 2022

پاکستان مسلم لیگ نواز کی قیادت کی جانب سے اسحاق ڈار کی بطور نئے وزیر خزانہ نامزدگی کی اطلاعات کے بعد پاکستان میں روپے کی قدر میں بہتری رپورٹ کی جا رہی ہے۔

کاروباری ہفتے کے پہلے روز پیر کو انٹر بینک میں روپے کی قدر میں اڑھائی روپے سے زائد کی بہتری دیکھی جا رہی ہے۔

کاروبار کے آغاز میں ایک امریکی ڈالر کی قیمت 239 روپے سے کم ہو کر 237 ہو گئی ہے۔

 معاشی ماہرین کا کہنا ہے کہ گزشتہ ہفتے کے آخری دو روز میں بھی روپے کی قدر خاص کمی نہیں ہوئی تھی اور آج صبح سے روپے میں بہتری دیکھی جا رہی ہے۔

فاریکس ڈیلرز کے مطابق پیر کے روز کاروبار کے آغاز پر انٹر بینک میں ایک امریکی ڈالر 237 روپے 19 پیسے  پر ٹریڈ کر رہا ہے۔ 

’اسحاق ڈار کے وزیر خزانہ بننے کی خبروں کا بھی اثر ہے‘ فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کے چیئرمین ملک بوستان کا کہنا ہے کہ روپے کی قدر میں گزشتہ ہفتے سے استحکام نظر آیا ہے، جبکہ ہفتے کے آخری دو روز میں بھی روپے کی قدر میں کوئی کمی نہیں دیکھی گئی تھی۔ 

انہوں نے ڈالر کی قیمت میں مزید کمی کی امید کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے روپے کو بہتر کرنے کے لیے اقدامات کیے ہیں لیکن ابھی مزید کام کرنے کی ضرورت ہے۔

ملک بوستان کے مطابق ’سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے وزیر خزانہ بننے کی خبروں کا بھی اثر ہے کہ ڈالر کی قیمت میں کمی ہو رہی ہے۔ ماضی میں بھی دیکھا گیا ہے کہ اسحاق ڈار نے اپنے دور میں ڈالر کو مستحکم رکھنے کے لیے کام کیا تھا۔‘

’اب ان کی واپسی کی خبروں کے بعد ایک بار پھر سے مارکیٹ میں ڈالر کی فروخت دیکھی جا رہی ہے۔ جن لوگوں نے ڈالر ہولڈ کیا تھا انہیں ڈر ہے کہ اگر قیمت نیچے آئی تو نقصان ہو گا۔‘

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More