ڈسکہ الیکشن معاملہ،ان دوحکومتی شخصیات کے خلاف کارروائی کی جائے ، ن لیگ نے بڑامطالبہ کرڈالا

روزنامہ اوصاف  |  Feb 26, 2021

لاہور(روزنامہ اوصاف)پاکستان مسلم لیگ (ن) نے این اے75ووٹ باکس چوری کرنے اور عملے کواغوا کرنے پر الیکشن کمیشن سے وزیراعظم اور وزیراعلی پنجاب کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ  اس بات کی تحقیقات کی جائیں کہ عمران صاحب اور عثمان بزدار نے یہ سازش کہاں بنائی؟ کون کون ملوث تھا؟۔ترجمان مسلم لیگ(ن) مریم اورنگزیب نے کہا کہ ووٹ اور الیکشن کمیشن کے عملے کی چوری کے اصل ذمہ دار عمران صاحب ہیں، ان کے خلاف کارروائی کی جائے،عمران صاحباور وزیراعلی پنجاب نے چیف سیکریٹری، آئی جی پنجاب سمیت پوری انتظامیہ کو یرغمال بنارکھا تھا ،ووٹ چوری کے اصل سرغنہ عمران صاحب کے خلاف کارروائی تک احتساب کا عمل نامکمل رہے گا۔اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ چیف سیکریٹری کیوں دستیاب نہیں تھے اور دوبارہ رابطہ کیوں نہیں کیا؟ اس سوال کا جواب تلاش کرنا ضروری ہے ،چیف الیکشن کمشنر سے گفتگو کے وقت چیف سیکریٹری کے علم میں تھا تو انہوں نے عملے کی واپسی کی یقین دہانی کرائی تھی،تمام حقائق اور شواہد گواہی دے رہے ہیں کہ ووٹ کی امانت میں خیانت عمران صاحب نے کی، مجرم وہی ہیں ،اصل مجرموں کے خلاف کارروائی جب تک نہیں ہوگی، انصاف کے تقاضے پورے نہیں ہوں گے۔مریم اورنگزیب نے کہاکہ 2018کی ووٹ چوری کی پیداوار 2021 میں وہی واردات دوہراتے رنگے ہاتھوں پکڑے گئے ،چیف الیکشن کمشنر اصل مجرموں سے صرف نظر نہ کریں، دھاندلی کی طرح انصاف ہوتا ہوابھی نظر آنا چاہئے ،عمران خان اور عثمان بزدار کے خلاف کارروائی کے بغیر الیکشن کمشن کا فیصلہ نامکمل ہے۔انہوں نے کہاکہ اس بات کی تحقیقات کی جائیں کہ عمران صاحب اور عثمان بزدار نے یہ سازش کہاں بنائی؟ کون کون ملوث تھا؟آرٹیکل 218 کے تحت الیکشن کمشن کی ازخودکارروائی تب تک نامکمل ہے جب تک عمران صاحب اور بزدار پر فرد جرم عائد نہیں ہوگی‎
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More