اولمپکس2021: جاپان نے کرونا ٹیسٹ کیلیے روبوٹ بنالیے

سماء نیوز  |  Jan 21, 2021

فوٹو: گلف نیوز

جاپان نے اولمپکس کو مدنظر رکھتے ہوئے مصنوعی بازو کے ذریعے مریض کے کرونا ٹیسٹ نمونے لینے کا کامیاب تجربہ کرلیا۔

جاپانی وزیرصحت کا کہنا ہے کہ مصنوعی بازو مریض کا کرونا ٹیسٹ کرے گا جبکہ 80منٹ میں نتیجہ بھی فراہم کردے گا۔

یہ روبوٹ کاواساکی ہیوی انڈسٹریز نے بنایا ہے اور جاپان رواں برس اولمپکس سے پہلے کرونا وبا کو کنٹرول کرنے اور اس کے علاوہ کرونا ٹسیٹوں میں تیزی لانے کیلیے ربورٹس تیار کررہاہ ہے۔

یہ روبوٹ سسٹم شپنگ کنٹینرز کے ذریعے ٹرکوں پر لاد کر کھیل کے میدانوں، پارکوں اور دیگر ایسے مقامات پر پہنچائے جاسکتے ہیں جہاں بڑے اجتماعات متوقع ہوں اور کم وقت میں بڑی تعداد میں کرونا ٹیسٹ کرنے ہوں۔

فوٹو: جاپان ٹائمز

جاپانی وزیراعظم یوشیدے سوگا کی حکومت پر کم تعداد میں ٹیسٹس کرنے پر تنقید کی جارہی ہے جبکہ حکومت کے پاس کرونا وبا کو قابو کرنے کیلیے 200دن سے بھی کم باقی رہ گئے ہیں کیونکہ اس کے بعد ملک میں اولمپکس ہونے جارہے ہیں۔

واضح رہے کہ کرونا وبا کے باعث اولمپکس پہلے ہی ایک سال تاخیر سے ہورہے ہیں۔

روبوٹس ایک مصنوعی بازو کے ذریعے ناک سے کرونا کے نمونے لیتے ہیں اور 40فٹ دور موجود کنٹینر میں ان نمونوں کا ٹیسٹ کیا جاتا ہے۔ یہ سسٹم 16گھنٹوں میں 2ہزار نمونوں کی پراسیسنگ کرسکتا ہے۔

یاد رہے کہ وبا کی شروعات سے جاپان نے کم تعداد میں ٹیسٹس کیے ہیں اور جاپان ٹارگٹ کرکے خاص علاقوں میں ہی ٹیسٹ کررہا ہے جہاں مریضوں کی تعداد زیادہ ہے۔اب تک جاپان روزانہ 55 ہزار ٹیسٹ کر رہا ہے جو اس کی استعداد کا آدھا ہے۔

ملک میں اب تک 3لاکھ 37ہزار افراد کرونا سے متاثر اور 4ہزار 598افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More