سندھ اسمبلی میدان جنگ بن گئی، حکومتی و اپوزیشن ارکان گتھم گتھا

بول نیوز  |  Feb 26, 2021

سندھ اسمبلی کے اجلاس میں اپوزیشن اور حکومتی اراکین آپس میں گھتم گتھا ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق سندھ اسمبلی میں حکومتی اور پی ٹی آئی ارکان میں جھگڑا ہوا، ایک دوسرے کو دھکے اور ہاتھا پائی کی گئی، خرم شیر زمان اور مکیش کمار چاولہ کے درمیان غیر پارلیمانی الفاظ کا استعمال بھی ہوا۔

سندھ اسمبلی کا اجلاس اسپیکر آغاسراج درانی کی زیر صدارت ہوا، اجلاس کے آغاز پر ہی اپوزیشن اور حکومتی ارکان میں سخت جملوں کا تبادلہ ہوا۔

اپوزیشن رکن خرم شیر زمان نے صوبائی وزیر مکیش چاؤلہ پر الزام عائد کیا کہ تم نے پورے سندھ کو شراب خانوں میں تبدیل کردیا ہے، جواب میں مکیش چاولہ نے خرم شیر زمان پر لوگوں کو باسی کھانا کھلانے کا الزام عائد کیا۔

جواب میں حکومتی رکن تیمور تالپور نے خرم شیرزمان کو دھمکی دی کہ ادھر آؤ میں تمہیں دیکھ لیتاہوں۔

دونوں ارکان میں سخت جملوں کا تبادلہ جاری تھا کہ پی ٹی آئی کے رکن سعید آفریدی بھی میدان میں آئے اور کہا کہ یہ ابھی اسمبلی میں دھمکیاں دےرہےہیں باہرپتہ نہیں کیاکرینگے، جس پر مکیش کمار چاؤلہ نے کہا کہ چوروں کے ٹولوں کو بولو تمیز سےبات کریں۔

اجلاس میں خرم شیر زمان نے اسپیکر کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اس ایوان کا ماحول خراب ہورہاہے اس کو کنٹرول کریں، ایک وزیر کھڑے ہوکربدتمیزی کررہےہیں۔

آغا سراج درانی نے کہا کہ میں تو کنٹرول کررہا ہوتا ہوں، آپ لوگ آؤٹ آف کنٹرول ہوجاتے ہیں، آپ لوگ لیڈر شپ پر کیوں جاتے ہیں، منسٹر آف ٹیکنالوجی کو کہناپڑےگا آپ سب کیلئے چپ بنائیں۔

اسپیکر سندھ اسمبلی نے تمام اراکین کو ہدایت کی کہ وہ اپنی سیٹوں پر بیٹھ جائیں اور جس رکن نے ماسک نہیں پہنا وہ باہر جائیں، اگر آپ لوگ چاہتے ہیں ہاؤ س نہیں چلے تو ملتوی کرتے ہیں، اسمبلی کی کارروائی کو عوام بھی دیکھ رہی ہے، تمام اراکین اسمبلی طریقہ کار کو فالو کریں۔

 

-->
مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More