شدیدہنگامہ آرائی کے دوران بلوچستان کا 584ارب روپے کابجٹ پیش

سماء نیوز  |  Jun 18, 2021

بلوچستان کا مالی سال 22-2021ء کیلئے 84.7 روپے خسارے کا بجٹ پیش کر دیا گیا، بجٹ کا کل حجم 584 ارب روپے ہے، اجلاس سے قبل اپوزیشن نے شدید ہنگامہ آرائی کی، وزیراعلیٰ پر جوتا اچھالا، بوتل ماری، پولیس کے ساتھ تصادم میں 3 اپوزیشن ارکان اسمبلی زخمی ہوگئے، پتھراؤ سے اسمبلی کے شیشے بھی ٹوٹ گئے۔

بلوچستان اسمبلی کا بجٹ اجلاس اسپیکر عبدالقدوس بزنجو کی زیرصدارت ہوا، صوبائی وزیر خزانہ ظہور بلیدی نے بجٹ پیش کرتے ہوئے کہا کہ غیر ترقیاتی اخراجات کیلئے 346 ارب جبکہ ترقیاتی اخراجات کیلئے 237 ارب روپے مختص کئے گئے ہیں۔

بلوچستان کے بجٹ میں تعلیم کے شعبے کیلئے 71 ارب، صحت کیلئے 38 ارب جبکہ  امن و امان کیلئے 52 ارب روپے رکھے گئے ہیں۔

وزیراعلیٰ بلوچستان کا کہنا ہے کہ صورتحال کے مطابق بہتریہن بجٹ پیش کیا گیا ہے۔

بجٹ اجلاس سے قبل اپوزیشن اراکین نے شدید ہنگامہ آرائی کی، دھرنا دیکر اسمبلی کے اندر جانیوالے راستوں کو بند کردیا۔ ڈپٹی کمشنر کوئٹہ کی سربراہی میں وفد نے اپوزیشن سے مذاکرات بھی کئے لیکن اپوزیشن نے احتجاج ختم کرنے سے انکار کردیا، جس پر پولیس نے دھرنے کے شرکاء پر دھاوا بول دیا، بکتر بند گاڑی کی ٹکر سے اسمبلی کا مرکزی دروازہ توڑ دیا گیا، پولیس کے ساتھ تصادم میں 3 اپوزیشن اراکن اسمبلی زخمی بھی ہوئے۔

 وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال سمیت حکومت ارکان سخت سیکیورٹی حصار میں اسمبلی پہنچے، اس دوران ہال کی جانب جاتے ہوئے اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے وزیراعلیٰ پر جوتا اور بوتل پھینکی گئی۔

اپوزشین رکن اسمبلی ثناء اللہ بلوچ نے سماء سے بات چیت کرتے ہوئے بتایا کہ بلوچستان کی تاریخ میں اتنی پولیس اور بکتر بند گاڑیاں آج تک اسمبلی میں نہیں دیکھیں، یہ عوامی بجٹ نہیں ہے، دھونس دھمکیوں سے ایسے بجٹ نہیں لائے جاتے، حکومت نے ہمیں ہماری کھوپڑیاں اڑانے کی دھمکیاں دی ہیں، ہم نے نہیں دیکھا کہ وزیراعلیٰ کو کس نے جوتا اور بوتل ماری۔

مزید جانیے: بلوچستان اسمبلی میں بجٹ سے قبل ہنگامہ آرائی،توڑ پھوڑ، ہاتھا پائیانہوں نے کہا کہ ہم پُرامن طریقے سے اسمبلی کے گیٹ پر دھرنا دیکر بیٹھے تھے کہ حکومت نے دھاوا بول دیا، ہم کہہ رہے تھے کہ بجٹ کو مؤخر کیا جائے، ہوسکتا ہے کہ حکومت بوتل اور جوتا اپنے ساتھ لائی ہو کیونکہ راکٹ لانچر، آنسو گیس کے شیل ساتھ لائے گئے تھے۔

بجٹ تقریر کے بعد اسپیکر عبدالقدوس بزنجو نے اسمبلی اجلاس 21 جون کی شام 4 بجے تک ملتوی کردیا۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More